قاتل دہشت گردوں کیلئے کوئی عام معافی نہیں ہوگی: حیدر العبادی کا اعلان

قاتل دہشت گردوں کیلئے کوئی عام معافی نہیں ہوگی: حیدر العبادی کا اعلان

بغداد ، ۱۳؍ جولائی ۔عراق کے وزیراعظم حیدر العبادی نے واضح کیا ہے کہ قاتل دہشت گردوں کو معاف نہیں کیا جائے گا۔انھوں نے بدھ کے روز وزارتی اجلاس میں ایک بیان میں کہا ہے کہ ’’ فوجی انسانی حقوق کے مدافعین ہیں۔انھوں نے انسانیت کو آزاد کرانے کے لیے اپنی جانوں کی قربانیاں دی ہیں اور شہریوں کو آزاد کرایا ہے۔حکومت انسانی حقوق کے دفاع کے لیے ان کی کوششوں کی حمایت کرتی ہے اور اگر کہیں انسانی حقوق کی کوئی خلاف ورزی ہوئی ہے تو وہ اس کے خلاف موقف اختیار کرے گی‘‘۔حیدر العبادی نے انسانی حقوق کی علمبردار تنظیموں سے کہا ہے کہ اپنے ذرائع کا جائزہ لیں، ان کی تصدیق کریں اور موصل کے عوام کی خوشی کو تسلیم کریں جنھوں نے بہادر عراقی فورسز کا بھرپور خیرمقدم کیا تھا۔انھوں نے داعش کے ہاتھوں لوگوں کے قتل عام کے وقت ان تنظیموں کے خاموش کردار پر افسوس کا اظہار کیا ہے۔حیدر العبادی نے کہا ہے کہ وہ داعش کے اشتعال انگیز اور فرقہ پرستی پر مبنی نظریے کو لوٹنے کی اجازت نہیں دیں گے۔انھوں نے یہ بات زور دے کر کہی ہے کہ کوئی بھی دہشت گرد سزا سے نہیں بچ سکے گا اور ہم قاتل دہشت گردوں کے لیے کوئی عام معافی نامہ نہیں جاری کریں گے‘‘ ۔ عراقی وزیراعظم نے یہ بات بھی زور دے کر کہی ہے کہ ’’ حکومت کو مستقبل میں معیشت ، ترقیاتی اور تعلیمی شعبوں پر اپنی توجہ مرکوز کرنی چاہیے کیونکہ یہی ریاست اور معاشرے کی نشاۃ ثانیہ کی بنیاد بن سکتے ہیں۔اس کے علاوہ بدعنوانی کے خلاف جنگ کی ضرورت ہے جس نے ریاست اور معاشرے کو آلودہ کردیا ہے۔نیز قانون کا بھی احترام کیا جانا چاہیے‘‘۔واضح رہے کہ انسانی حقوق کی عالمی تنظیم ایمنسٹی انٹرنیشنل نے موصل کو داعش سے بازیاب کرانے کی لڑائی میں شہریوں کی بڑی تعداد میں ہلاکتوں پر عراقی فورسز اور ان کے اتحادیوں کی مذمت کی ہے ۔




Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *