مدرسہ چشمۂ فیض ململ کے زیراہتمام عظیم الشان جلسہ دستاربندی ۱۴؍نومبرمنگل کوہوگا

مدرسہ چشمۂ فیض ململ کے زیراہتمام عظیم الشان جلسہ دستاربندی ۱۴؍نومبرمنگل کوہوگا

امیرشریعت مولاناسیدمحمدولی رحمانی فارغین حفاظ کے سروں پردستارفضیلت باندھیں گے
ململ،10؍نومبر (آئی این ایس انڈیا)
آل متھلانچل مسابقۃ القرآن الکریم کے مبارک موقع سے مدرسہ چشمۂ فیض ململ سے فارغ ہونے والے حفاظ کرام کے سروں پردستارفضیلت باندھی جائے گی۔دستاربندی کایہ اجلاس ۱۴؍نومبرمنگل کے دن بعدنمازمغرب منعقدہوگا۔اس اجلاس کی صدارت امیرشریعت مفکراسلام حضرت مولاناسیدمحمدولی رحمانی جنرل سکریٹری آل انڈیامسلم پرسنل لاء بورڈ فرمائیں گے جب کہ اس اجلاس کے مہمان خصوصی خادم القرآن حضرت مولاناغلام محمدوستانوی بانی ومہتمم جامعہ اسلامیہ اشاعت العلوم اکل کوامہاراشٹرہوں گے۔یہ اطلاع اجلاس کے کنوینرمولانافاتح اقبال ندوی اورناظم مسابقہ مولاناغفران ساجدقاسمی نے مشترکہ طورپر جاری ایک پریس ریلیزکے ذریعہ دی۔انہوں نے بتایاکہ پروگرام کی ساری تیاریاں مکمل ہوچکی ہیںاوراب مہمانوں کے استقبال کے لئے ململ واطراف ململ کی عوام بے صبری سے اجلاس کے دن کاانتظارکرہی ہے۔انہوں نے پروگرام کی تفصیلات کی وضاحت کرتے ہوئے کہاکہ حسب اعلان سابق مسابقہ ۱۴؍نومبرکوصبح ۸؍بجے شروع ہوجائے گااورمسابقہ کی کارروائی پہلے دن مغرب تک چلے گی۔مغرب کے بعددستاربندی کا جلسہ ہوگاجس میں مدرسہ چشمۂ فیض ململ کے فارغین حفاظ کے سروں پردستارفضیلت باندھی جائے گی۔انہوں نے مزیدکہاکہ ۲۰۰۲ء سے اب تک فارغین حفاظ کی تعدادتقریبا۴۰۰؍سے زائدہے،حفاظ کرام کومطلع کرنے کے لئے باضابطہ ملک بھرکے اخبارات میں اشتہاربھی دیاگیاتھاجس میں سے تقریباڈیڑھ سوکے قریب حفاظ نے مدرسہ کے دفتراہتمام سے رابطہ کرکے اپنے ناموں کااندراج کرادیاہے اورمذکورہ ڈیڑھ سوحفاظ نے اپنی آمدسے بھی مدرسہ کوباخبرکردیاہے۔لہٰذااس بات کی امیدکی جاتی ہے کہ مذکورہ دستاربندی کے جلسہ میں تقریباڈیڑھ سوحفاظ کے سروں پردستارفضیلت باندھی جائے گی۔پروگرام کی تفصیل پرمزیدروشنی ڈالتے ہوئے کہاکہ دوسرے دن بعدنمازفجرسے نمازظہرتک مسابقہ کی کارروائی چلے گی۔اسی دوران ۱۵؍نومبربدھ کے دن ۱۰؍بجے سے ۱۲؍بجے تک حضرت امیرشریعت مولاسیدمحمدولی رحمانی صاحب کی ہدایت پر علماء اورائمہ کرام کے لئے ایک خصوصی نشست کااہتمام کیاگیاہے جس میں امیرشریعت مولاناسیدمحمدولی رحمانی صاحب کی صدارت میں ناظم امارت شرعیہ مولاناانیس الرحمان قاسمی اوردارالعلوم ندوۃ العلماء لکھنؤ کے استاذعربی ادب مولانانذرالحفیظ ندوی ازہری کاخصوصی خطاب ہوگا۔اس نشست میں ملت کودرپیش مسائل اورن کے حل پرکھل کرگفتگوہوگی۔پھر۱۵؍نومبرکوبعدنمازمغرب حضرت امیرشریعت کی صدارت میں اجلاس عام ہوگاجس میں ملک وبیرون ملک سے تشریف لائے ہوئے علمائے کرام کااہم خطاب ہوگا۔




Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *