مرکزعلم ودانش علی گڑھ مسلم یونیورسٹی کی اہم خبریں

مرکزعلم ودانش علی گڑھ مسلم یونیورسٹی کی اہم خبریں

علی گڑھ مسلم یونیورسٹی میں ویب ڈیولپمنٹ پر دو روزہ ورکشاپ کا انعقاد
علی گڑھ: 13؍مارچ
بصیرت نیوزسروس
ویمنس پالی ٹیکنک، علی گڑھ مسلم یونیورسٹی (اے ایم یو) کے ٹریننگ و پلیسمنٹ سیل کی جانب سے ویب ڈیولپمنٹ پر دو روزہ ورکشاپ منعقد کی گئی جس کا مقصد اساتذہ اور طلبہ کو سافٹ ویئر اور جدید ٹولس کے بارے میں ٹریننگ دینا تھا۔ ورکشاپ میں 50؍سے زائد لوگ شریک ہوئے۔
ٹریننگ و پلیسمنٹ کوآرڈنیٹر مسٹر طارق احمد نے شرکاء کا خیرمقدم کرتے ہوئے کہا کہ ورکشاپ سے ویب ڈیولپمنٹ کی مختلف تکنیک کو سمجھنے اور جدید ٹکنالوجیز کو استعمال کرکے ویب ڈیولپر بننے میں مدد ملے گی۔ انھوں نے ورکشاپ کے انعقاد میں تعاون کے لئے یونیورسٹی ویمنس پالی ٹیکنک کی پرنسپل ڈاکٹر سلمیٰ شاہین کا شکریہ ادا کیا۔
ٹریننگ و پلیسمنٹ آفیسر ڈاکٹر جہانگیر عالم نے سافٹ ویئر ڈیولپر مسٹر محسن قریشی (tecnosters.com، نوئیڈا) اور ویمنس پالی ٹیکنک کے لیکچرر مسٹر محمد وسیم احمد کا خیرمقدم کیا۔ انھوں نے نظامت کے فرائض انجام دئے اور حاضرین کا شکریہ بھی ادا کیا۔
ورکشاپ کی اختتامی تقریب کی صدارت یونیورسٹی کے ٹریننگ و پلیسمنٹ آفیسر (جنرل) مسٹر سعد حمید نے کی۔
٭٭٭٭٭٭
پروفیسرغلام سرور ہاشمی اے ایم یو کورٹ کے رکن مقرر
علی گڑھ، 13؍مارچ: علی گڑھ مسلم یونیورسٹی(اے ایم یو) کے ڈاکٹر زیڈ اے ڈینٹل کالج کے اورل اینڈ میکسیلوفیشیل سرجری شعبہ کے سربراہ ڈاکٹر غلام سرور ہاشمی سینیارٹی کی بنیاد پر اے ایم یو کورٹ کے ممبر مقرر کئے گئے ہیں۔ ان کی مدت کار تین سال کے وقفہ کے لئے یا صدرِشعبہ رہنے تک کے لئے ہوگی۔ جواہر لعل نہرو میڈیکل کالج کے انستھیسیولوجی شعبہ کے سربراہ پروفیسر عبدالقادر کے انتقال پُرملال کے باعث خالی ہونے والی جگہ پر ڈاکٹر ہاشمی کورٹ کے رکن مقرر ہوئے ہیں۔
٭٭٭٭٭٭
ڈِس ایبلٹی یونٹ کی جانب سے کاؤنسلنگ پروگرام منعقد
علی گڑھ، 13؍مارچ: علی گڑھ مسلم یونیورسٹی(اے ایم یو) کی ڈِس ایبلٹی یونٹ کی جانب سے مختلف صلاحیتوں کے حامل طلبہ اور رضاکاروں کے لئے ایک کاؤنسلنگ پروگرام منعقد کیا گیا جس میں شعبۂ نفسیات کے پروفیسر اکبر حسین نے مختلف صلاحیتوں کے حامل طلبہ طالبات کو پیش آنے والی دشواریوں اور ان کے مسائل پر گفتگو کی۔ انھوں نے جذباتی و نفسیاتی مسائل سے نبردآزما ہونے کے طور طریقے بھی بتائے۔
اس موقع پر ڈِس ایبلٹی یونٹ کے کوآرڈنیٹر پروفیسر خالد بن یوسف نے اے ایم یو کے سابق طالب علم اور مختلف صلاحیتوں کے حامل افراد کے حقوق کے لئے جدوجہد کرنے والے مرحوم ڈاکٹر جاوید عابدی کو خراج عقیدت پیش کیا ۔
ڈاکٹر ریاض احمد اور ڈاکٹر سید فیض زیدی نے طلبہ کو یقین دلاتے ہوئے کہا کہ ڈِس ایبلٹی یونٹ اس طرح کے کاؤنسلنگ پروگرام منعقد کرتا رہے گا تاکہ طلبہ طالبات کی حوصلہ افزائی ہو۔ اس موقع پر ضرورتمندوں کو پین ڈرائیو، کَرَچ، اینگل، ہیڈ فون وغیرہ بھی تقسیم کئے گئے۔
٭٭٭٭٭٭
قصبہ جلالی میں گُردہ امراض کی جانچ کے لئے مفت طبی کیمپ لگایا گیا
علی گڑھ، 13؍مارچ: علی گڑھ مسلم یونیورسٹی(اے ایم یو) کے جواہر لعل نہرو میڈیکل کالج (جے این ایم سی) کے شعبۂ میڈیسن کے اشتراک سے امامیہ میڈکس انٹرنیشنل ،(زہرہ باغ)نے علی گڑھ کے قصبہ جلالی کے مدرسہ امامیہ میں گُردہ اسکریننگ و بیداری کیمپ منعقد کیا۔
کیمپ میں جے این ایم سی کے ڈاکٹر سیف قیصر، ڈاکٹر حیدر حسینی، ڈاکٹر ایس حسن امیر نے مریضوں کی جانچ کی اور انھیں مفت طبی مشورے دئے۔ کیمپ میں 166؍مریضوں نے رجسٹریشن کرایا تھاجس میں سے 19؍مریض ٹائپ 2؍ ذیابطیس کے اور 24؍مریض گُردہ کے پائے گئے۔ مریضوں کے خون کی جانچ اور ای سی جی مفت میں کی گئی اور انھیں ایک ہفتہ کی دوائیں دی گئیں۔ انھیں مزید علاج کے لئے جواہر لعل نہرو میڈیکل کالج آنے کا مشورہ دیا گیا۔ صبح 10؍بجے سے دوپہر ایک بجے تک جاری رہنے والے طبی کیمپ کے انعقاد میں آرگنائزنگ سکریٹری ڈاکٹر وصی جعفری نے بطور خاص تعاون کیا۔
٭٭٭٭٭٭
اے ایم یو کے زولوجی شعبہ کے ڈاکٹر حفظ الرحمان صدیقی کو ایوارڈ سے نوازا جائے گا
علی گڑھ، 13؍مارچ: علی گڑھ مسلم یونیورسٹی(اے ایم یو) کے زولوجی شعبہ کے اسسٹنٹ پروفیسر ڈاکٹر حفظ الرحمان صدیقی کو شیر کشمیر انسٹی ٹیوٹ آف میڈیکل سائنسز، سری نگر میں 20؍اپریل 2018کو منعقد ہونے والے انڈین اکیڈمی آف بایو میڈیکل سائنسز کے ساتویں سالانہ اجلاس میں ’مسز فرح دیبا ایوارڈ سے نوازا جائے گا۔
ڈاکٹر صدیقی نے آسام یونیورسٹی سے بی ایس سی، اے ایم یو سے ایم ایس سی اور آئی آئی ٹی آر لکھنؤ سے پی ایچ ڈی کرنے کے بعد پوسٹ ڈاکٹرل فیلو کے طور پر امریکہ میں 8؍سال گزارے، جہاں انھوں نے یونیورسٹی آف وِسکونسِن، یونیورسٹی آف مِنّیسوٹا، یونیورسٹی آف ساؤتھ کیلی فورنیا اور موفِٹ کینسر سنٹر میں نامور سائنسدانوں کی نگرانی میں ٹریننگ حاصل کی۔ مختلف قومی و بین الاقوامی جرائد میں ڈاکٹر صدیقی کے متعدد تحقیقی مقالے شائع ہوچکے ہیں ۔وہ متعدد سائنسی جرائد کو ریویو کرتے ہیں اور کئی مجلوں کے ادارتی بورڈ میں بھی وہ شامل ہیں۔
٭٭٭٭٭٭
پروفیسر مقبول حسن خاں کو تعزیتی جلسہ میں خراج عقیدت پیش کیا گیا
علی گڑھ، 13؍مارچ: علی گڑھ مسلم یونیورسٹی(اے ایم یو) کے شعبۂ انگریزی کے سابق سربراہ پروفیسر مقبول حسن خاں کے انتقال پُرملال پر ایک تعزیتی جلسہ فیکلٹی آف آرٹس میں منعقد ہوا۔
اس موقع پر پروفیسر فرحت اللہ خاں نے پروفیسر مقبول حسن خاں کے ساتھ اپنے روابط کا ذکر کرتے ہوئے کہاکہ پروفیسر مقبول مرحوم ایک نیک و ایماندار انسان تھے اور ان کے گہرے دوست تھے۔ وہ اپنے موضوع پر زبردست مہارت رکھتے تھے۔
ڈین فیکلٹی آف آرٹس پروفیسر محمد زاہد نے اپنی طالب علمی کے دور کو یاد کرتے ہوئے کہاکہ پروفیسر مقبول ایک شفیق استاد تھے ، انھوں نے اہم علمی کارنامے انجام دئے۔
شعبۂ انگریزی کے سربراہ پروفیسر محمد عاصم صدیقی نے اپنی طالبعلمی کے زمانہ میں پروفیسر مقبول کے کلاس کی کیفیت بیان کی۔ انھوں نے کہا کہ ان کی کلاس بہت علمی ہوا کرتی تھی اور ان کے لیکچرس بہت دلچسپ اور دلکش ہوتے تھے۔ پروفیسر ثمینہ خاں اور ڈاکٹر مونا شبیر خاں جنھیں پروفیسر مقبول نے پڑھایا تھا اور پھر انھوں نے ان کے ساتھ کام بھی کیا، اپنے استاد کے انتقال کو ناقابل تلافی نقصان قرار دیا۔ ڈاکٹر جاوید ایس احمد نے تعزیتی قرارداد پڑھی۔
قابل ذکر ہے کہ پروفیسر مقبول حسن خاں نے 1959میں لکھنؤ یونیورسٹی سے انگریزی میں ایم اے کرنے کے بعد شیکسپئر انسٹی ٹیوٹ برمنگھم میں برٹش کونسل کی اسکالر شپ حاصل کی۔ انھوں نے برمنگھم یونیورسٹی، یوکے سے شیکسپیریئن مطالعات میں ایم اے کیا۔
انگریزی اور اردو میں وہ کثرت سے لکھتے تھے۔ ڈاؤڈن اور والٹر رالے کی Shakespearean Criticism پر ان کی تصنیف اہمیت کی حامل ہے۔انھوں نے ہیملیٹ اور ٹیمپسٹ کو بھی معلوماتی مقدمہ اور حواشی کے ساتھ ایڈٹ کیا ، جو اوریئنٹ بلیک سوان سے شائع ہوئی۔
پروفیسر مقبول حسن خاں نے گورنمنٹ کالج، کوٹہ (راجستھان ) میں 1961سے 1962تک بطور لیکچرر کام کیا۔ شعبۂ انگریزی ، اے ایم یو میں انھوں نے بطور لیکچرر 25؍جنوری 1963میں جوائن کیا۔ 1977میں وہ ریڈر ہوئے اور 1985میں پروفیسر بنے۔ وہ 1993میں تین سال کے لئے صدرِ شعبہ بنے۔ پھر 1997سے 1998تک صدر شعبہ رہے۔ 31؍مئی 1998کو وہ ملازمت سے ریٹائر ہوئے۔
تعزیتی جلسہ میںیونیورسٹی کے مختلف شعبوں کے اساتذہ ، ریسرچ اسکالرس اور طلبہ طالبات شریک ہوئے۔
٭٭٭٭٭٭
پروفیسر آسیہ چودھری کو ’’مینجمنٹ میں ممتاز خاتون‘‘ کا ایوارڈ
علی گڑھ، 13؍مارچ: علی گڑھ مسلم یونیورسٹی(اے ایم یو) کے شعبۂ کامرس کی پروفیسر آسیہ چودھری کو ’’مینجمنٹ میں ممتاز خاتون‘‘ کے ایوارڈ سے نوازا گیا ہے۔ پروفیسر آسیہ چودھری کو یہ ایوارڈ مینجمنٹ کے شعبہ میں ان کی نمایاں خدمات اور حصولیابیوں کے لئے وینس انٹرنیشنل فاؤنڈیشن کی جانب سے تفویض کیا گیا۔ یہ ایوارڈ انھیںحال ہی میں چنئی میں سالانہ خواتین کانفرنس میں پیش کیا گیا۔