مولاناخورشیدداؤدقاسمی کے صاحبزادے احمد خورشید داؤد نے نہایت ہی کم عمری ناظرہ قرآن کریم مکمل کیا

مولاناخورشیدداؤدقاسمی کے صاحبزادے احمد خورشید داؤد نے نہایت ہی کم عمری ناظرہ قرآن کریم مکمل کیا

زامبیا،افریقہ:13؍مئی(بی این ایس)
خوشی ومسرت کی بات ہے کہ نہایت ہی کم عمری میں، آج ’’احمد خورشید داؤد‘‘ نے ناظرہ قرآن کریم مکمل کیا ہے۔ احمد خورشید نے گزشتہ سال شوال کے مہینے میں ’’نورانی قاعدہ‘‘ پڑھنا شروع کیا تھا۔ پھر نہایت ہی قلیل عرصے میں “نورانی قاعدہ” اور “جزء عم” مکمل کرکے، قران کریم شروع کیا تھا۔ ایک سال سے بھی کم کی مدت میں، اس معصوم بچے نے ناظرہ قرآن کریم مکمل کرلیا، الحمد للہ۔احمد خورشید ابھی تقریبا ساڑھے پانچ سال کا۔
احمد خورشید کے والد مولانا خورشید عالم داؤد قاسمی نے جہاں اپنے بچے کے ختم قرآن پر خوشی کا اظہار کیا، وہیں انھوں نے احمد خورشید کی اساتذہ: ام احمد خورشید اور شیخ حسن صاحب کا بھی شکریہ ادا کیا کہ ان کی ہی محنت سے یہ بچہ اتنی جلدی ناظرہ قرآن کریم ناظرہ مع رعایت مخارج پڑھنے کے لائق ہوسکا۔
واضح رہے کہ احمد خورشید داؤد کے والد جناب مولانا خورشید عالم داؤد قاسمی دار العلوم دیوبند کے فاضل ہیں اور جامعہ ملیہ اسلامیہ، نئی دہلی سے ایم اے بھی کرچکے ہیں۔ مولانا موصوف زامبیا میں مون ریز ٹرسٹ اسکول میں، شعبہ اسلامیات کے ہیڈ ہیں اور زامبیا میں ہی مع اہل وعیال مقیم ہیں۔ احمد خورشید مون ریز ٹرسٹ اسکول میں، گریڈ ون (Grade:One) میں زیر تعلیم ہے۔
آج ایک مختصر سی تقریب میں احمد خورشید داؤد نے مون ریز ٹرسٹ اسکول کے چیرمین اور شیخ طریقت حضرت مولانا قمر الزماں صاحب (دامت برکاتہم) کے خلیفہ: شیخ شاہد متالا صاحب (حفظہ اللہ) کے سامنے آخری سبق پڑھ کر، قرآن کریم ناظرہ مکمل کیا۔ اس تقریب میں احمد خورشید کے استاذ: شیخ حسن، مفتی نعمان، مون ریز ٹرسٹ اسکول کے اڈمنسٹریٹر مسٹر ابراہیم موانزا، مولانا شاہد گنکات، مولانا ادریس، مفتی آصف اعظمی، مولانا کمال،شیخ موسی، مولانا قاسم، شیخ یاسین، مسٹر اسماعیل، حافظ ابرار احمد وغیرہم نے شرکت کرکے اپنی دعاؤں سے نوازا۔احمد خورشید کے ختم قرآن کریم کی اطلاع پر، احمد خورشید کے بڑے ابو مولانا عبد الصمد صاحب، قاری عبد الاحد صاحب اور مولانا توحید صاحب نے خوشی کا اظہار کیا اور مبارک باد پیش کی۔ دعا ہے کہ اللہ تعالی اس معصوم بچے کو دین کا سچا خادم بنائے! آمین!