ہندوستان

کوروناوائرس اپڈیٹ:تازہ ترین اعدادوشمارکے مطابق متاثرین کی کل تعداد606 اورمرنے والوں کی تعدادہوئی 10

ممبئی: 26؍مارچ(بی این ایس؍ایجنسی) وزیراعظم نریندرمودی نے کوروناوائرس کے قہرکودیکھتے ہوئے ملک میں مکمل طورپرلاک ڈان کااعلان کردیاہے۔لیکن اس کے باوجودبھی ملک میں کوروناوائرس کاقہربڑھتاہی جارہاہے۔تازہ ترین اعدادوشمارکودیکھیں توابھی تک متاثرین کی کل تعداد606 ہوگئی ہے جب کہ کوروناسے مرنے والوں کی تعداد10 ہوگئی ہے۔حکومت کوروناکوپھیلنے سے روکنے کی ہرممکن احتیاطی تدابیرکررہی ہے لیکن اس کے باوجودمتاثرین کی تعدادبڑھتی ہی جارہی ہے۔تازہ اعدادوشمارکے مطابق سب سے زیادہ متاثرین کی تعدادمہاراشٹرمیں ہے۔یہاں اب تک کل 128 متاثرین پائے گئے ہیں۔اس کے علاوہ کیرالہ میں 109،کرناٹک میں 41،گجرات میں 38،اترپردیش میں37،راجستھان میں 36،تلنگانہ میں 35،دہلی میں 31،پنجاب میں 29،ہریانہ میں 28،تاملناڈومیں18،مدھیہ پردیش میں 14،لداخ میں 13،آندھراپردیش اورمغربی بنگال میں 9،چنڈی گڑھ اورجموں کشمیرمیں7،بہاراوراتراکھنڈمیں4،ہماچل پردیش میں 3،اڈیشہ میں2،پانڈیچری،منی پور،چھتیس گڑھ اورمیزورم میں1-1 متاثرین پائے گئے ہیں۔
وہیں دوسری جانب دنیابھرمیں متاثرین کی تعداد4؍لاکھ 54ہزار 398 ہوچکی ہے۔اورمرنے والوں کی کل تعداد20ہزار550 ہوچکی ہے۔
مودی حکومت نے کوروناکے پھیلاؤ کوروکنے کے لئے ملک میں مکمل طورپرلاک ڈاؤ ن کااعلان کردیاہے اوراس پرسختی سے عمل کرایاجارہاہے۔احتیاطی تدابیرکے لئے یہ قدم مناسب ہے لیکن وہیں تصویرکادوسراپہلویہ ہے کہ اس لاک ڈان میں سب سے زیادہ پریشانی روزانہ پرکام کرنے والے مزدوروں کوہورہی ہے۔مکمل لاک ڈان سے ان کاکام بندہوگیاہےاوروہ کھانے کھانے کے محتاج ہوگئے ہیں۔اس کے ساتھ ہی ایسے بدحال مزدوربھی ہیں جنہیں ان کے مالکان نے فیکٹری اورکارخانوں سے نکال دیاہے اب نہ توان کےپاس رہنے کے لئے گھرہے اورنہ کھانے کے لئے پیسے۔اسی طرح ہزاروں کی تعدادمیں شہرمیں ایسے لوگ بھی ہیں جن کاگذربسرہوٹلوں میں ہوتاہے توحکومت کوچاہئے کہ ایسے مزدوروں کے لئے بھی کوئی ایساٹھوس قدم اٹھائے جس سے انہیں بھوکوں نہ مرناپڑے۔

Tags
Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker