Baseerat Online News Portal

راہل گاندھی کے بیان پرمہاراشٹرکی سیاست میں ہلچل: اتحادمیں دراڑکی خبریں،ادھوٹھاکرے آج کریں گے حلیف پارٹیوں سے ملاقات

ممبئی:27؍مئی(بی این ایس؍ایجنسی)مہاراشٹرمیں مہااگھاڑی اتحادمیں دراڑکی خبروں کے درمیان مہاراشٹرکے وزیراعلیٰ ادھوٹھاکرے آج حلیف پارٹیوں سے ملاقات کریں گے۔انہوں نے آج اتحادی جماعتوں،این سی پی اورکانگریس کی میٹنگ بلائی ہے ۔این سی پی کے سربراہ شردپواراوروزیراعلیٰ ادھوٹھاکرے کے درمیان بات چیت کے بعدقیاس آرائی تیزہوگئی ہے ۔حالاںکہ شیوسینااوراین سی پی نے اتحادسے علاحدگی کی خبروں کی تردیدکی ہے۔لیکن کانگریس کے سابق صدرراہل گاندھی کے ایک بیان کے بعدمہاراشٹرمیں بنی اتحادی حکومت کی دوجماعتوں شیوسینااوراین سی پی کے سامنے بے اطمینانی کی کیفیت پیداکردی ہے۔
واضح رہے کہ گذشتہ دنوں راہل گاندھی نے میڈیاکے ایک سوال کاجواب دیتے ہوئے کہاتھاکہ میں یہاں کے حالات کوالگ طریقے سے رکھناچاہوں گا۔مہاراشٹرمیں ہم حکومت کی حمایت کررہے ہیں لیکن ہم وہاں اہم پالیسی سازنہیں ہیں۔ہم پنجاب،چھتیس گڑھ،راجستھان اورپانڈیچری میں پالیسی ساز ہیں۔حکومت چلانااورحکومت کی حمایت کرنادونوںمیں بہت فرق ہوتاہے۔اس کے ساتھ ہی راہل گاندھی نےکہاکہ میں نے بہت واضح طورپرکہاہے کہ مہاراشٹرایک بہت ہی اہمیت کاحامل صوبہ ہے،ممبئی ملک کی اقتصادی راجدھانی ہے اوراس پرلوگوں کی توجہ مرکوزہے۔یہاں کے حالات بہت مشکل ہیں اورمرکزکی جانب سے ریاست پربہت زیادہ توجہ دیئے جانے کی ضرورت ہے۔
راہل گاندھی کے اسی بیان پراتحاد پرسوال کھڑے ہونے شروع گئے۔ظاہرسی بات ہے کہ کانگریس حکومت میں شامل ہے اوراس کے ممبران وزارت میں بھی شامل ہیں پھریہ کہناکہاں تک درست ہوگاکہ وہ پالیسی سازنہیں ہیں اورفیصلہ کرنے میں وہ شامل نہیںہیں۔اس پراین سی پی کے لیڈرمجیدمیمن نے کہاکہ یہ کہنابالکل صحیح نہیں ہے کہ کانگریس پالیسی سازی اورفیصلہ کرنے والوں میں شامل نہیں ہے۔کانگریس کے اراکین وزارت کاحصہ ہیں۔وہ باہرسے حمایت نہیں دے رہےہیں۔وہ کابینہ میں ہیں اورمہاراشٹرحکومت کے ذریعہ لئے گئے فیصلوں پردستخط کرنے والوں میں کانگریس پارٹی بھی شامل ہے۔
وہیں این سی پی سربراہ شردپوارنے این ڈی ٹی وی سے بات کرتے ہوئے کہاتھاکہ مہاراشٹرحکومت کے لئے کوئی خطرہ نہیں ہے۔سبھی ایم ایل اے ہمارے ساتھ ہیں۔اس وقت اسے توڑنے کی کسی بھی کوشش کاانجام بہت بھیانک ہوگا۔حالاںکہ وزیراعلیٰ کے ساتھ پوارکی میٹنگ سے کانگریس غائب تھی لیکن این سی پی سربراہ نے کہا کہ تینوں اتحادی پارٹیاں ساتھ ہیں اورکوروناوائرس سے لڑنے کے لئے ایک ساتھ ہیں۔

You might also like