ہندوستان

مرکز کے پروگرام میں حصہ لینے والے غیر ملکی شہریوں کو متبادل رہائش گاہ میں بھیجنے کی اجازت دی گئی

نئی دہلی،28مئی(بی این ایس )
دہلی ہائی کورٹ نے نظام الدین کے مرکز پروگرام میں حصہ لینے والے 955 غیر ملکی شہریوں کو جمعرات کو ادارہ علیحدہ مسکن مراکز سے اختیاری رہائش گاہ میں بھیجے جانے کی اجازت دے دی۔جسٹس وپن ساگھی اور جسٹس رجنیش بھٹناگر کی بنچ ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعے کیس کی سماعت کی اور مختلف غیر ملکی شہریوں کی جانب سے دائر دو درخواستوں کا نمٹاراکیا۔بنچ نے کہا کہ ان میں سے سب کو سرکاری تنہائی مراکز سے ان کی تجاویز کے مطابق قومی دارالحکومت کے نو مقامات پر منتقل کیا جائے گا۔غیر ملکی شہریوں کو متبادل رہائش گاہ بھیجنے کی درخواست گزار کے وکیل کے مشورے پر مرکز، دہلی حکومت اور دہلی پولیس کی طرف سے اعتراض نہیں کرنے کے بعد ہائی کورٹ نے یہ فیصلہ دیا،ساتھ ہی وکیل نے یہ بھی کہا کہ اس پر آنے والے اخراجات کو کمیونٹی اور تبلیغی جماعت برداشت کرے گی۔اس سے پہلے ہائی کورٹ نے ایک درخواست پر حکام سے جواب مانگا تھا جس میں 916 غیر ملکی شہریوں کو رہا کرنے کا مطالبہ کیا گیا تھا، جنہوں نے نظام الدین مرکز میں حصہ لیا تھا اور کووڈ 19 کی جانچ میں کوروناکی تصدیق نہیں ہونے کے بعد، انہیں 30 مارچ سے تنہائی مراکز میں رکھا گیا تھا،بعد میں اسی طرح کی درخواست بہت سے دوسرے غیر ملکی شہریوں نے دائر کی تھی۔دہلی حکومت کے وکیل راہل مہرا اور وکیل چیتنی گوسائی کے ذریعے آمدنی محکمہ نے دائر پوزیشن رپورٹ میں غیر ملکی شہریوں کو دوسری جگہوں بھیجے جانے پر کوئی اعتراض نہیں اٹھایا۔اسی طرح دہلی پولیس اور مرکز نے بھی زبانی طور پر اعتراض نہیں ظاہر کیا۔ہائی کورٹ کو یہ بھی مطلع کیا گیا کہ نچلی عدالتوں میں ابھی تک غیر ملکی شہریوں کے خلاف 47 چارج شیٹ دائر ہوچکی ہیں۔

Tags
Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker