ہندوستان

کورونا کے 28فیصد معاملے بغیر علامات والے ہیں، قریبی لوگوں کو انفیکشن کی معلومات نہیں ہوپاتی :آئی سی ایم آر

نئی دہلی ،31 ؍مئی (بی این ایس )
انڈین کونسل آف میڈیکل ریسرچ (آئی سی ایم آر ) نے گزشتہ دو ماہ میں کورونا وائرس پر دو تحقیق کے اعداد و شمار سامنے رکھے ہیں۔22 جنوری سے 30 اپریل کے درمیان وہ لوگ جو مثبت پائے گئے ان میں سے 28فیصد بغیر علامات والے تھے۔ کنٹیکٹس میں بھی کورونا کے علامات نہیں دیکھنے کو ملے۔اس دوران کل 40184 لوگوں کے مثبت ٹیسٹ ہوئے جن میں سے 2.8 فیصد ہیلتھ ورکرز تھے۔تین ماہ سے زیادہ وقت میں 10.21 لاکھ لوگوں کا ٹیسٹ ہوا جن میں سے 3.9فیصد مثبت پائے گئے۔ 21 اپریل کوآ ئی سی ایم آر نے کہا تھا کہ اس کی تحقیق کے مطابق 69فیصد معاملے بغیر علامات والے ہیں۔ جو ابھی کے 28 فیصد کے مقابلے بہت زیادہ ہے۔اس وقت تک تقریباً چار لاکھ نمونے ٹیسٹ ہوئے تھے اور 18601 مثبت لوگ ملے تھے۔تازہ تحقیق بتاتی ہے کہ گزشتہ 8 ہفتوں میں ٹیسٹنگ میںکئی گنا اضافہ ہوا۔مارچ کے آغاز میں جہاں ایک دن میں 250 لوگوں کی ٹیسٹنگ ہوتی تھی، اپریل کے آخر تک یہ تعداد 50 ہزار ٹیسٹ روزانہ ہوتی ہے۔ بغیر علامات والے معاملے اتنے زیادہ کیوں ہیں، اس پرآئی سی ایم آر کے حکام نے کہا کہ بہت سے لوگ صحیح معلومات نہیں دے پائے۔آبادی میں کس لیول تک وائرس پھیلا ہوا ہے، اس کا پتہ سیرولوجیکل سروے سے لگا رہے ہیں۔تحقیق ظاہر کرتی ہے کہ نزدیکی لوگوں میں کورونا انفیکشن پھیلنے کا امکان سب سے زیادہ ہے اور یہ وائرس مردوں اور بوڑھوں کو جلدی متاثر کرتا ہے۔

Tags
Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker