ہندوستان

ایم پی: گیہوں بیچنے کے لئے باری کا انتظار کرنے والے کسان کادل کا دورہ پڑنےسے انتقال،وزیر نے کہا کسی کو بھی دل کا دورہ پڑ سکتا ہے

بھوپال:02؍ جون (بی این ایس )
مدھیہ پردیش کے دیواس میں گیہوں فروخت کرنے آئے ایک کسان کی موت ہوگئی ہے۔ موت کی وجہ دل کا دورہ بتایا جارہا ہے۔ مدھیہ پردیش میں ایک اور کسان اپنی پیداوار فروخت کرنے کے انتظار میں 7 دن کے اندر ہی دم توڑ گیا۔ 65 سالہ جے رام مینڈلوئی دیواس میں اپنا گیہوںبیچنے کے لئے اپنی باری کا انتظار کر رہا تھا ۔ اسی کے ساتھ ہی انہیں دل کا دورہ پڑا۔ اس کی موت دیواس کے ضلعی اسپتال میں ہوئی۔جے رام مینڈلوئی کو 29 مئی کو خریداری مرکز سے ایک ایس ایم ایس موصول ہوا،30اور 31مئی کو سیا گائوں کے خریداری مرکز کے قریب انتظار کرتے رہے۔ اس کے خاندان کے افراد کا کہنا ہے کہ اسے پہلے کوئی بیماری نہیں تھی۔ ان کے بھائی رام چندر مینڈلوئی نے کہاکہ خریداری مرکز میں کوئی ٹوکن کا سسٹم موجود نہیں تھا، کسانوں کو پہلے آئو پہلے پائوکی بنیاد پر اجازت دی گئی تھی۔ اگر کوئی ٹوکن انتظام ہوتا تو ہم متعینہ وقت پرپہنچ سکتے تھے۔ جے رام کے بیٹے سچن مانڈلوئی نے بتایاکہ ٹریکٹر ٹرالی لانے والے ڈرائیور نے ہمیں اطلاع دی کہ میرے والد کو دل کا دورہ پڑا ہے، اور وہ اسے دیواس اسپتال لے جا رہے ہیں۔ جب میں اجین سے دیوس آیا تو اس نے مجھے اپنی موت کی خبر بتائی۔ اس کے بارے میں بتایا۔اس دن میں دوپہر میںگیا تھا، اپنے والد کو کھانا دینے آیا تھا۔ میرے والد کو پہلے ہی کوئی بیماری نہیں تھی جب ان کے بیٹے کو خریداری مراکز میں بد انتظامی کے بارے میں پوچھا گیا تو اس نے کہا میرے والد چلے گئے اس سے زیادہ کچھ نہیں کہنا چاہوں گا۔دیواس کے ایس ڈی ایم پروین سونی نے بتایا کہ اتوار کی رات دل کا دورہ پڑنے کے بعد انہیں فوری طور پر دیواس ضلع اسپتال پہنچایا گیا اور علاج کے دوران ان کی موت ہوگئی۔ اس کی موت بدقسمتی ہے۔ ہم کسانوں کی فلاح و بہبود اسکیم کے تحت ان کے اہل خانہ کو 4 لاکھ روپے دینے کی رسم کو پورا کر رہے ہیں۔اس معاملے میں جب وزیر زراعت کمل پٹیل سے پوچھاگیا تو انہوں نے کہاکہ کسی کو بھی دل کا دورہ پڑ سکتا ہے۔

Tags
Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker