مسلم دنیا

حج 2020: 21؍جون کے بعدہی حتمی فیصلہ کیاجاسکے گا

آن لائن نیوزڈیسک
وزارت صحت کے ترجمان ڈاکٹر محمد العبدالعالی نے کہا ہے کہ حج کے حوالے سے معاملات پر سنجیدگی سے غور کیا جارہا ہے فیصلہ عوام الناس کے بہترین مفادات کو مقدم رکھتے ہوئے کیا جائے گا۔
ترجمان صحت نے منعقدہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے مزید کہا کہ 21 جون کے بعد کی حکمت عملی کے بارے میں تفصیلی طور پر مطلع کریں گے تاکہ کورونا وائرس سے بچاؤ کےلیے آئندہ کے مرحلے میں احتیاطی تدابیر اخیتار کی جاسکیں۔
ویب نیوز ’سبق‘ کی جانب سے پوچھے گئے سوال کا جواب دیتے ہوئے ترجمان صحت ڈاکٹر محمد العبدالعالی نے کہا کہ ’ کورونا کے حوالے سے احتیاطی تدابیر کے بارے میں جامع حکمت عملی مرتب کی جارہی ہے جس پر سب کو عمل کرنے کی ضرورت ہے۔‘
’ہمارے لیے انتہائی ضروری ہے کہ ہر حوالے سے معاشرے کو تمام حالات و معاملات سے درست طور پر باخبر رکھیں اور انہیں مکمل شفافیت سے تیزی سے تبدیل ہوتی ہوئی صورتحال واضح کرتے رہیں۔‘
انہوں نے مزید کہا کہ ’جیسا کہ کورونا وائرس سے متعلق اختیار کی جانے والی تمام حکمت عملی کے بارے میں ماضی میں وزارت صحت اور دیگر متعلقہ اداروں کے معاملات آپ واضح طور پر دیکھ چکے ہیں، ہر مرحلے کے آغاز میں ہی طریقہ کار اور احتیاطی تدابیر کے بارے میں پریس بریفینگ کے دوران سب کچھ واضح اور شفاف انداز میں بیان کیا جاتا رہا۔
حج کی ادائیگی کے حوالے سے سوال پر ترجمان صحت کا کہنا تھا کہ ’جیسا کہ ماضی میں مختلف موقعوں پر حالات کا جائزہ لینے کے بعد ان کے تمام پہلوں پر غور کر کے فیصلہ کیا جاتا رہا اس بار بھی ایسا ہی کیا جائے گا، اس میں شک کی کوئی گنجائش نہیں کہ سعودی عرب اور اسکی قیادت و عوام اور تمام ادارے ہمیشہ سے ہی حرمین شریفین اور ضیوف الرحمان و معتمرین و زائرین مسجد الحرام کی خدمت اپنے لیے باعث افتخار سمجھتے ہیں۔‘
ترجمان صحت کا مزید کہنا تھا کہ ’ تمام ادارے عوام کے مفاد کو مدنظر رکھتے ہوئے (حج) اس حوالے سے موضوع پر سنجیدگی سے غور کررہے ہیں جس میں تمام پہلوں کو باریک بینی سے جانچا جائے گا اس کے بعد ہی لوگوں کے بہترین مفاد کو مقدم رکھتے ہوئے فیصلہ جاری کیا جائے گا جس میں تمام پہلوں کو مدنظر رکھا گیا ہو۔‘

Tags
Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker