Baseerat Online News Portal

بہار:ریاست بھر میں 10 ندیاں خطرہ کے نشان کو عبور کرلیا

پٹنہ،12؍جولائی( بی این ایس )
نیپال کے میدانی علاقوں اور بہار کے میدانی علاقوں میں بارانِ مسلسل کی وجہ سے شمالی بہار کی تمام بڑے ندیوں میں طغیانی آگئی ہے۔ ہفتے کے روز تقریباًندیوں کی آبی سطح خطرے کے نشان تک پہنچ گئی۔ کوسی ، گندک ، باگمتی ، کملا بلان ، بھوتھی ، لال بکیہ اور مہانند اجیسی ندیاں خطرے کے نشان سے اوپر بہہ رہی ہیں۔نیپال کے نشیبی علاقوں میں ہونے والی بارش سے کوسی اور سیمانچل کے کئی علاقوں میں سیلاب آگیا ہے۔ سوپول میں کوسی بیراج سے ہفتہ کی صبح 5 بجے 2 لاکھ 76 ہزار کیوسک پانی چھوڑنے کے باعث کوسی میں بھی طغیانی آگئی ہے۔ اس کی وجہ سے ضلع سوپول کے چھ بلاک کے علاقہ جو کوسی پشتہ میں واقع ہیں ،ان میں سیلاب کا پانی آ گیا ہے۔ 100 سے زیادہ دیہات اور 10 ہزار سے زیادہ مکانات اس سے متأثر ہوئے ہیں۔ خیال رہے کہ سیلاب کا پانی سیتامڑھی بلاک اور زونل آفس سمیت ضلع کے سیکڑوں مکانات میں داخل ہوگیا ہے۔پچھلے 24 گھنٹوں کے دوران ، مونگیر میں گنگا کے آبِ سطح میں 70 سینٹی میٹر کا اضافہ ہوا۔ سیتا مڑھی اور مظفر پور میں باگمتی ، مدھوبنی میں کملا بلان اور بوڑھی گنڈک ، سیوان میں گھاگھرا، نیپال کے ویر پور میں کوسی ، سہرسہ ، کھگڑیا اور بھاگل پورمیں اور مہانندا کشن گنج خطرے کے نشان سے اوپر بہہ رہی ہیں۔شمالی بہار کے تیر ہ اضلاع میںہفتہ کے روز بھاری بارش ہوئی۔ چن پٹیاں میں زیادہ سے زیادہ 150 ملی میٹر بارش ہوئی۔ موسمیاتی مرکز نے نیپال سے ملحقہ اضلاع میں شدید بارش اوربرقِ سماوی کی گرج کے ساتھ بارش کا انتباہ جاری کیا ہے ۔

You might also like