Baseerat Online News Portal

ریختہ فاؤنڈیشن کی نئی پہل، ’ہندوی‘ کاڈیجیٹل افتتاح آج

 600 ہندی کوی│ 11,000 کویتائیں، بس ایک کلک کے فاصلے پر۔

 

 

11ہزارکویتائیں،بس ایک کلک کے فاصلے پر

نئی دہلی، 31 جولائی: گزشتہ 1,200 سالوں کی ہندی کویتا کی نمایندہ    شکل کو ایک ساتھ جمع کرنے کے مقصد سے ریختہ فاؤنڈیشن کی نئی پہل  ‘ہندوی’ کا  ڈجیٹل افتتاح  31 جولائی کو نوبیل انعام یافتہ کیلاش ستیارتھی کریں گے۔

[www.hindwi.org]

ابتدا ئی دور (آدی کال) سے لے کر دور جدید (آدھونک کال) تک کی ہندی کویتا کے نمایندہ 600 کویوں اور ان کی 11,000 کویتاؤں کے ساتھ ‘ہندوی’ نے ہندی کویتا کو مصدقہ طور پر پیش کرنے کی کوشش کی ہے۔

ریختہ ۔او۔ آر۔جی کے بعد’ہندوی اردو شاعری اور ادب کے سب سے مستند اور عظیم خزانے کے بعد ہندوی ریختہ فاؤنڈیشن کی نئی پیشکش ہے۔

ہندی کویتا اپنے سارے ادوار(آدی کال، بھکتی کال، ریتی کال، آدھونک کال)، اپنی سارے رجحانات، جوش و خروش، تحریکوں اور مباحث کے ساتھ موجود ہے۔ اس کے علاوہ ‘ہندوی’ پر 500 سے زیادہ  ای۔ کتابیں اور 250 ویڈیو بھی موجود ہیں۔ اس میں مسلسل اضافہ بھی جاری رہے گا۔ اس کے ساتھ ایک کشش کویتا میں آئے شبدوں کے معنی کو کویتا پڑھتے وقت ہی جان لینے کی بھی ہے۔ اس کے لیے ایک منظم ‘لغت’ بھی خاص ‘ہندوی’ کے لیے تیار کیا گیا ہے۔

ہندوی’ کے ڈجیٹل رسم اجرا کے موقع پر مشہورکوی، نقاد اور ثقافتی  کارکن اشوک واجپئی اور مشہور کوی، ادیب راجیش جوشی کے ساتھ  کویتا پر ایک مباحثہ بھی رکھا گیا ۔ اس خوش گوار موقع پر ہندی سنیما اور آرٹ  کی دنیا کے مشہور فنکاروں، رگھوبیر یادو، دویا دتا، رجت کپور، سوانند کرکرے، مانوکول اور لبنی  سلیم ، اور دوسری شخصیات کچھ مشہور ہندی کویتاؤں کا پاٹھ کی۔ اس تقریب کی لائیو براڈ کاسٹنگ ‘ہندوی’ کی ویب سائٹ اور ریختہ کے سبھی سوشل میڈیا ہینڈل پر کی گئی تھی۔

”اردو شاعری اور ادب کے علاقے میں ریختہ کی کامیابی کے ساتھ ہی ہندی  ادب کے لیے بھی ریختہ فاؤنڈیشن کچھ کرے، یہ امید برابر کی جاتی رہی ہے۔ ہندوی ڈاٹ آرگ کو لانچ کرنا ہماری طرف سے اس ضرورت کو ہی پوری کرنے کی ایک چھوٹی سی کوشش ہے۔ ہم یہ بھی مانتے ہیں کہ اس سے دو بہن زبانیں (ہندی اور اردو) اور نزدیک آئیں گی۔ اس کے ساتھ ہی ہمارے بر صغیر کی دوسری زبانوں کے تحفظ اور توسیع میں اس سے مدد ملے گی۔ یہ اسٹیج، تکنیک، فنکارانہ صلاحیت، تخلیق اور سوشل میڈیا کی مدد سے اس سمت میں آگے بڑھے گا۔ یہ ہماری مشترکہ تہذیبی وراثت کو سمیٹنے کی طرف ایک قدم ہے”  

سنجیو صراف، بانی، ریختہ فاؤنڈیشن

 

  31جولائی کو ہندوی کا افتتاح اس لئے بھی خاص ہے، کیوں کہ اس دن ہندی اور اردو دونوں ہی زبانوں کے معروف و مقبول ادیب پریم چند کی 140 ویں سالگرہ ہے۔ 

ریختہ فاؤنڈیشن کے بارے میں:

2012 میں صنعت کار سنجیو صراف کے ذریعہ قایم کیا گیا۔ ریختہ فاؤنڈیشن بنیادی طور پر اردو شاعری اور ادب سے منسوب ہے، جس میں 40,000 غزلیں، 26,000 شاعر اور 7,500 نظمیں ہیں۔ ویب سائٹ میں 4,100 آڈیو، 7,000 ویڈیو اور 60,000 ای کتابیں بھی شامل ہیں۔

اردو ادب کے تحفظ اور توسیع کی اپنی کوششوں سے فاؤنڈیشن نے اب تک 90,000 کتابوں اور 19 ملین صفحات کو ڈجٹائز کیا ہے۔ فاؤنڈیشن ‘جشن ریختہ’ نام سے ایک  سہ روزہ سالانہ تقریب کا بھی اہتمام کرتا ہے، جس میں  ادب اور آرٹ کے جانے مانے چہرے اپنے خیالات اور آرٹ سے اردو کے مختلف اور دلچسپ پہلوؤں پر چرچا کرنے کے لیے ایک جگہ جمع ہوتے ہیں۔ فاؤنڈیشن کی دیگر سرگرمیوں میں آموزش ویب سائٹ کے ذریعے اردو سکھانے کا عمل اور صوفی ادب سے منسوب صوفی نامہ بھی شامل ہیں۔ ریختہ کا ایپ بھی اب اینڈرائڈ اور آئی۔او۔ایس پر دستیاب ہے۔

https://www.facebook.com/HindwiOfficial/live/

You might also like