Baseerat Online News Portal

کووڈ 19 کی طرح گلوبل وارمنگ سے نمٹنے کے لئے عالمی لائحہ عمل ضروری ،امجد علی

یوم الارض کے موقع پر جالے اور کیوٹی میں شجر کاری مہم ، ماحولیات کے تحفظ کے لئے زیادہ سے زیادہ پودے لگائے جائیں

کووڈ 19 کی طرح گلوبل وارمنگ سے نمٹنے کے لئے عالمی لائحہ عمل ضروری ،امجد علی

یوم الارض کے موقع پر جالے اور کیوٹی میں شجر کاری مہم ، ماحولیات کے تحفظ کے لئے زیادہ سے زیادہ پودے لگائے جائیں

 

دربھنگہ ۔محمد رفیع ساگر / بی این ایس

9اگست 2020

آج کورونا وائرس (کووڈ-19) جس طرح عالمی سطح پر ایک بڑا چیلینج بن کر کھڑا ہے اسی طرح گلوبل وارمنگ اور ماحولیاتی آلودگی بھی عالمگیر سنگین مسائل میں شامل ہیں جس پر قابو پانے کیلئے پوری دنیا کو ایک ساتھ ایک پلیٹ فارم پر آکر لائحہ عمل تیار کرناہوگا اس کے بعد ہی ہم اپنی اور آئندہ کی نسلوں کیلئے اس زمین پراپنا وجود اور ایک خوشگوار زندگی کا تصور کر سکتے ہیں۔مذکورہ باتیں مقامی بلاک میں واقع امجد کلاسیز کے ڈائریکٹر امجد علی نے بہار یوم الارض کے موقع پر شجرکاری کے بعد اپنے خصوصی پیغام میں کہیں۔ اس موقع پر انہوں نے کہا کہ گذشتہ کچھ برسوں میں زمین کی درجہ حرارت میں مسلسل اضافہ جاری ہے جو کہ ایک خوفناک مستقبل کی علامت ہے اور ایسی صورتحال میں زمین کا موزوں اور معتدل بنانا ہی ہماری اہم ذمہ داری ہے اسلئے امسال حکومت نے کورونا وائرس انفیکشن اور سیلاب کی تباہی کے سبب کسی طرح کے پروگرام کرنے سے گریز کیا ہے لیکن بڑے پیمانے پر ریاست میں شجر کاری مہم چلا کر ماحولیاتی تحفظ کی سمت میں ایک بڑا قدم اٹھایا ہے اس کے علاوہ خالص ماحول کیلئے جل جیون ہریالی اسکیم بھی چلارہے ہیں جو کہ بہار حکومت کی قابل ستائش اقدام میں شامل ہے کیونکہ آج کی صنعتی ترقیاتی دور میں مختلف انسانی سرگرمیوں سے ہر طرف آلودگی ہی پیدا ہوتی ہے اس لئے اس کے سدباب کیلئے پیڑ پودے لگانا ہی سب سے بڑا ہتھیار ہے۔مسٹر امجد علی نے کہا کہ آج گلوبل وارمنگ جیسے سنگین مسائل سے مختلف اقسام کے گیسوں میں بے تحاشا اضافہ جاری ہے اس کے ساتھ ہی گرین ہاوس گیسوں کے مضر اثرات و ازون سطح میں سوراخ ہونے کے سبب سورج سے آنے والی الٹراوائلیٹ شعاع سیدھے زمین پر آنے لگی ہے جس کا نتیجہ ہیکہ مرض تنفس ، تیزابی بارش ، امراض جلد ، پھیپھڑوں سے متعلقہ بیماریاں سمیت کینسر جیسے مہلک مرض انسانی زندگی پر حملہ کر رہے ہیں اگر قبل از وقت اس پر قابو پانے کے طریقوں کو تلاش نہ کرلیا جائے یا پھر سائنسدانوں کے بتائیں ہوئے طریقوں پر عمل درآمد نہیں ہونگے اس وقت تک ہم اپنی زمین کی تحفظ کو یقینی نہیں بنا سکتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ کورونا وائرس کی وجہ کر جو مکمل طور پر لاک ڈاون تھا اس وقت صنعتی سرگرمیاں سمیت تمام طرح کے آمد و رفت کے وسائل منسوخ تھے اس وقت کئی ایسے اہم تحقیقات سامنے آئیں جس میں واضح تھا کہ لاک ڈاون کی وجہ کر حد درجہ ماحولیاتی آلودگی کنٹرول ہوئی ہے اسی لئے کورونا وائرس کو شکشت دینے کے بعد حکومت کے ساتھ مل کر آج پوری دنیا کے عوام کو بالخصوص نئی نسل کے طلباء کو پیش رفتی کرتے ہوئے زمینی مسائل سے روشناس ہو کر اس سمت میں قدم بڑھانا ہوگا تاکہ ہماری آج کی محنت و پریشانی سے کل کا مستقبل سنور جائیں نہیں تو پھر ہمارے ہاتھوں میں سوائے تاریک مستقبل کے کچھ نہیں ہوگا۔اسی گرری میں جے ڈی یو لیڈر ولی امام بیگ چم چم نے اپنے حامیوں کے ساتھ اپنے دروازے پر پودا لگا کر ریاست گیر شجرکاری مہم میں حصہ لیا ۔جبکہ کیوٹی میں جل جیون ہریالی مہم مشن 51.2 کروڑ شجرکاری کے تحت ارتھ ڈے کے موقع پر اتوار کو بلاک ہیڈ کوارٹر کیمپس میں منریگا ڈیپارٹمنٹ کی جانب سے درخت لگانے کا کام کیا گیا۔ شجرکاری میں کے دوران

بی ڈی او مہتاب انصاری اور پی او رومان فردوس اور جے ای رمن کمار جھامشترکہ طور پودے لگائے۔ اس دوران مہوگنی کے 12 پودے لگائے گئے۔ اس موقع پر سی او اجیت کمار جھا ، پی ٹی اے انجم افروز ، پرویش کمار جھا ، ستندر کمار ، ااونٹنٹ سندیپ کمار ، آفس اسسٹنٹ عبد الرحمن وغیرہ موجود تھے۔

You might also like