Baseerat Online News Portal

مظفر پور شیلٹر ہوم کیس: ہائی کورٹ نے برجیش ٹھاکر کی اپیل پر سی بی آئی سے جواب مانگا

نئی دہلی،15ستمبر(بی این ایس )
دہلی ہائی کورٹ میں مظفر پور شیلٹر ہوم کیس میں عمر قید کی سزا بھگتنے والے برجیش ٹھاکر کی اپیل پر سی بی آئی کو جواب داخل کرنے کے لئے مزید 2 ہفتوں کا وقت دیا گیا ہے۔ اس معاملے میں، ہائی کورٹ نے سماعت کے لئے اگلی تاریخ یکم اکتوبر مقرر کی ہے۔دہلی کی ساکیت عدالت نے بہار کے مظفر پور ضلع کے ایک شیلٹر ہوم میں 40 سے زیادہ لڑکیوں کے جنسی زیادتی کے معاملے میں برجیش ٹھاکر کو مجرم قرار دیا تھا اور اسے عمر قید کی سزا سنائی گئی تھی۔دہلی ہائی کورٹ میں برجش ٹھاکر نے نچلی عدالت کے 20 جنوری اور 11 فروری کے فیصلے کو منسوخ کرنے کے لئے اپیل دائر کی تھی۔ اس پر ہائی کورٹ نے سی بی آئی کو نوٹس جاری کرتے ہوئے ان سے اپنا جواب داخل کرنے کو کہا۔ منگل کو اس سماعت میں، ایجنسی نے اپنا جواب داخل کرنے کے لئے مزید 2 ہفتوں کا مطالبہ کیا۔ اس سے قبل برجش ٹھاکر کو 20 جنوری کے فیصلے میں ٹرائل کورٹ نے اس کیس میں سزا سنائی تھی اور 11 فروری کو عمر قید کی سزا سنائی تھی۔تاہم، ہائی کورٹ نے سی بی آئی کو اگلی تاریخ کو اسٹیٹس رپورٹ یا جواب داخل کرنے کی ہدایت دی ہے۔ ہائی کورٹ نے برجیش ٹھاکر کی درخواست پر سی بی آئی سے جواب بھی طلب کیا ہے جس میں اس نے نچلی عدالت سے درخواست کی ہے کہ وہ اس پر عائد 32.20 لاکھ روپے جرمانہ بند کرے۔ برجیش ٹھاکر نے کہا ہے کہ اس وقت وہ یہ رقم ادا کرنے سے قاصر ہیں کیونکہ ان کے تمام اکاؤنٹس کو تفتیشی ایجنسیوں نے منجمد کردیا ہے۔

You might also like