Baseerat Online News Portal

نتیش کمارنے وعدے پورے نہیں کیے، ایل جے پی کے پارلیمانی بورڈکی میٹنگ ، للن سنگھ کے خلاف مذمتی قرار داد منظور

پٹنہ16ستمبر(بی این ایس )
این ڈی اے کی اہم حلیف ایل جے پی کوبہارکے وزیراعلیٰ نتیش کمار کا ترقیاتی ماڈل پسند نہیں ہے۔ آج دہلی میں ایل جے پی پارلیمانی ارکان کی اہم میٹنگ میں سبھی ارکان پارلیامنٹ نے مخالفت کی۔ میٹنگ میںحاجی پور کے ایم پی پشو پتی کمار پارس ،کھگڑیا کے ایم پی محبوب علی قیصرنے دہلی ایمس سے ورچوئل کے توسط سے شرکت کی۔ اس سے قبل ایل جے پی کے سربراہ چراغ پاسوان نے بی جے پی کے قومی صدر جے پی نڈا سے کل دیر رات ان کی رہائش گاہ پر ملاقات کی تھی اور سیٹوں کی تقسیم پرتفصیلی بات چیت ہوئی تھی۔ یہ بھی مسلمہ حقیقت ہے کہ جے پی نڈا نے دو دن قبل بہار دورے پر آئے تھے۔ انہوں نے واضح طور پر کہا تھا کہ بہار میں نتیش کمار کی قیادت میںہی این ڈی اے انتخاب لڑے گا۔موصولہ اطلاع کے مطابق ایل جے پی کے ارکان پارلیامنٹ کی اہم نشست میں پارٹی کے دو سابق ارکان پارلیامنٹ سورج بھان سنگھ اور کالی پانڈے نے بھی حصہ لیا۔سابق ایم پی کالی پانڈے نے یہا ں تک کہا کہ جے ڈی یو کے ہر ایک امیدوار کے خلاف ایل جے پی کواپناامیدوارمیدان میں اتارناچاہیے۔ دلتوں کو 3ڈسمل زمین دینے کے موضوع پر ارکان پارلیامنٹ نے کہاہے کہ نتیش کمار نے اس وعدے کو بھی وفا نہیں کیا۔ جمہوری نظام میں کارکنان لیڈران اور وزراء کو نتیش کمار اہمیت نہیں دیتی ہے۔ بہارمیں افسرشاہی پوری طرح حاوی ہے جس کے سبب منتخب عوامی نمائندوں کی ایک نہیں چلتی۔ایل جے پی کے ارکان پارلیامنٹ نے جے ڈی یو کے ایک اہم لیڈر للن سنگھ کے ذریعہ چراغ پاسوان کو کالی داس کہے جانے پر غم وغصہ کااظہار کرتے ہوئے اس کے خلاف ایک مذمتی قرار داد بھی منظورکیا گیا۔

You might also like