Baseerat Online News Portal

من کی بات میں پی ایم کا بیان : کسان بل سے کسانوں کا ہوگافائدہ، جہاں اچھی قیمتیں ملیں گی اپنی پیدوار بیچیں گے

نئی دہلی ، ۲۷؍ستمبر(بی این ایس )
وزیر اعظم نریندر مودی نے اتوار کے روز 69 ویں بار ’من کی بات‘ پروگرام کے ذریعے ملک سے خطاب کیا ۔ اس دوران انہوں نے لوگوں کو مشورہ دیا کہ وہ کرونا کے خلاف احتیاطی تدابیر کی پوری توجہ رکھیں۔ بچوں کو کہانیاں سنانے کی روایت ختم کرنے پر تشویش بھی ظاہر کی ۔انہوں نے کسانوں کو یقین دلایا کہ ان کے بلوں سے نقصانات کے بجائے فائدہ ہوگا۔ جہاں انہیں زیادہ قیمت ملے گی ، وہ اپنی فصل اور پھل فروخت کرسکیں گے۔ پروگرام کے اختتام میں پی ایم مود ی نے مہاتما گاندھی ، لال بہادر شاستری ، جئے پرکاش نارائن اورراج ماتا سندھیا کی شراکت کو یاد کیا۔ اگلے ماہ ان تمام مشہور شخصیات کی سالگرہ ہے۔پی ایم نے کہا کہ کرونا مدت میں دو گز کا فاصلہ ضروری ہے ، اس دوران کئی خاندانوں کو بھی پریشانی کا سامنا کرنا پڑا۔کنبہ کے بڑے لوگ بچوں کو کہانیاں سنانے میں گزاریں، کہانیاں حساس پہلوؤں کو بیان کرتی ہیں۔ پی ایم مودی نے کہا کہ مجھے حیرت ہو رہی ہے کہ گھروں میں کہانیوں کی روایت ختم ہورہی ہے ۔ پی ایم مودی نے یہ بھی کہا کہ مجھے کئی کسانوں اور ان کی تنظیموں کی طرف سے خطوط موصول ہو رہے ہیں کہ زراعت میں تبدیلیاں کیسے ہورہی ہیں؟ ہریانہ کے کسان کنور چوہان نے بتایا کہ انہیں منڈیوں کے باہر پھل اور سبزیاں بیچنے میں پریشانی ہوتی تھی، گاڑیاں ضبط کرلی جاتی تھیں۔ 2014 میں اے پی ایم سی ایکٹ میں تبدیلیاں کی گئیں۔ انہوں نے ایک گروپ میں تشکیل دیاگیا، اب ان کی اشیاء کو فائیو اسٹار ہوٹلوں میں فراہم کیا جارہا ہے۔ ڈھائی سے تین کروڑ سالانہ کی آمدنی ہوتی ہے۔ یہ طاقت ملک کے دوسرے کسانوں کی طاقت ہے۔گندم ، دھان ، گنے یا کسی بھی فصل کو یہ اختیار حاصل ہوا ہے کہ وہ جہاں چاہیں اپنی پیداور بیچیں ۔ممبئی کے پونے میں کسان ہفتہ وار مارکیٹوں کے مالک ہیں۔ اس کے براہ راست فوائدبھی ہیں۔پی ایم مودی نے زور دے کر کہا کہ کسانوں کو نئے کسان بل سے فائدہ ہوگا، جہاں اچھی قیمتیں ہوں گی ، وہاں اپنی پیداوار پھل اور سبزیاں بیچیں گے ۔ پی ایم مودی نے کہا کہ 1919 میں جلیانوالہ کے قتل عام کے بعد ایک بچہ وہاں گیا۔وہ بچہ حیران تھا کہ کوئی یہ کیسے کرسکتا ہے؟اس بچے نے انگریزی سلطنت کا تختہ الٹنے کا عزم کیا،وہ بچہ عظیم شہید بھگت سنگھ تھا۔ کل 28 ستمبر کو ان کی یوم پیدائش ہے۔ آزادی کی جدو جہد میں بھگت سنگھ اور ان کے ساتھیوں نے جو اہم کردار ادا کیا ہے، وہ ناقابلِ فراموش ہے۔ کئی سارے انقلابی شخصیات جیسے چندر شیکھر آزاد ، راج گرو ، سکھ دیو ، شہید اشفاق اللہ خان کا ایک ہی مقصد تھا ، ہندوستان کو آزاد کروانا۔ہم بھگت سنگھ نہیں بن سکیں گے ، لیکن ہم ان کے نقش قدم پر چلنے کی کوشش کر سکتے ہیں۔ پی ایم مود ی نے یہ بھی کہا کہ چار سال قبل ستمبر میں ہندوستان سرجیکل ا سٹرائک کرنے کے لئے پی او کے گیا تھا۔ ہمارے جوانوں نے اپنی زندگی سے قطع نظر ناقابل برداشت ہمت کا مظاہرہ کیا۔ مسٹر گاندھی ، شاستری اور جے پی کو یادکیا،کیوں کہ اگلے مہینے ان کی سالگرہ آنے والی ہے ۔ پی ایم مودی نے کہا کہ ہم کئی ساری عظیم شخصیات کی یوم پیدائش منائیں گے۔ 2 اکتوبر مہاتما گاندھی اور لال بہادر شاستری کی یوم پیدائش ہے۔

You might also like