Baseerat Online News Portal

کانگریس نے تیجسوی سوریہ کے متنازعہ بیان پرکارروائی کا مطالبہ کیا

بنگلورو28ستمبر(بی این ایس )
بی جے پی کے ممبرپارلیمنٹ تیجسوی سوریہ کے بنگلوروسے متعلق انتہائی متنازعہ بیان کے بعد کانگریس حملہ آور ہوگئی ہے۔تیجسوی سوریہ نے اتوار کے روز دعویٰ کیاہے کہ بنگلورو دہشت گردی کی سرگرمیوں کا مرکز بن گیا ہے۔ اسی سلسلے میں انہوں نے مرکزی وزیر داخلہ امیت شاہ سے ملاقات کی ہے اور مطالبہ کیا ہے کہ کرناٹک کے دارالحکومت میں قومی تفتیشی ایجنسی (این آئی اے) کا مستقل دفتر قائم کیا جائے۔ ان کے بیان پر کانگریس کے سینئر لیڈر ڈی کے شیوکمارنے ان پرکارروائی کا مطالبہ کیا ہے کہ بی جے پی کو اپنے نوجوان لیڈرکے خلاف کارروائی کرنی چاہیے۔کانگریسی لیڈر نے کہاہے کہ بی جے پی لیڈرکا بیان بنگلوروکے لیے شرم کی بات ہے۔ بی جے پی کو اپنے لیڈرکے خلاف کارروائی کرنی چاہیے۔سوریہ نے انتخابی حکمت عملی کے تحت متنازعہ بیان دیاہے کہ دہشت گرد تنظیمیں شہر کو اپنی سرگرمیوں کا مرکز بنانا چاہتی ہیں۔ سوریہ نے کہاہے کہ اس سلسلے میں دو دن قبل انہوں نے وزیرداخلہ امیت شاہ سے ملاقات کی اور بنگلورو میں این آئی اے کا دفتر کھولنے کی اپیل کی ہے جوجدید سہولیات سے آراستہ ہواور جہاں ملازمین کی تعداد کافی ہو۔ انہوں نے کہاہے کہ وزیر داخلہ نے مجھے یقین دہانی کرائی ہے کہ وہ جلد از جلد پولیس سپرنٹنڈنٹ پولیس کے عہدے کے افسر کی نگرانی میں مستقل دفتر کھولنے کی ہدایت کریں گے۔سوریہ بہارمیں بی جے پی کی طرف سے اتارے گئے ہیں ۔ممکن ہے کہ اس طرح کے متنازعہ بیانات بہارکی سیاسی فضاکومتاثرکرنے کے لیے انتخابی حکمت عملی کے تحت دیے گئے ہوں۔

You might also like