Baseerat Online News Portal

پپویادو کی سرپرستی میں : ہاتھرس اجتماعی جنسی زیادتی کو ایشو بنا کر آج سے ’بیٹی بچاؤ‘ تحریک کا آغاز

پٹنہ ،۳۰؍ستمبر(بی این ایس )
یوپی کے ہاتھرس میں دلت لڑکی کے ساتھ اجتماعی زیادتی اور قتل کا معاملہ بہار اسمبلی انتخابات میں بھی گونجنے جارہا ہے۔ ایک طرف جہاں پپو یادو اس کو ایک بڑا مسئلہ بنائیں گے، وہیں آر جے ڈی نے وزیر اعلی نتیش کمار پر طنز کیا ہے ۔ بدھ کے روز پپو یادو نے کہا کہ کل سے وہ بیٹیوں کی حفاظت کے لئے خصوصی مہم چلائیں گے ، جبکہ آر جے ڈی کے تیج پرتاپ یادو نے بھی ٹوئٹ کیا ہے ،تیج پرتاپ یادو نے وزیراعلیٰ نتیش کمار کی کھنچائی کرتے ہوئے کہا کہ ’’اولادیں ہوتیں تو صاحب کوبھی درد ہوتا‘‘ ،کے ساتھ ہیش ٹیگ لگایا ہے ۔ آر جے ڈی کارکنان اس ہیش ٹیگ کو ٹوئٹر پر فالو کررہے ہیں ۔ وہیں پپو یادو نے مطالبہ کیا ہے کہ ہاتھرس کے واقعے میں متأثرہ لڑکی کے لواحقین کو یوپی سرکار کو ایک کروڑ کا معاوضہ ادا کرنا چاہئے۔ انہوں نے یہ بھی مطالبہ کیا کہ کنبہ کے ایک ممبر کو بھی سرکاری نوکری بھی دی جائے۔ اس کے ساتھ پپو یادو نے متأثرہ افراد کے اہل خانہ کو دو لاکھ روپے کی امداد فراہم کرنے کا بھی اعلان کیا ہے ۔ پپو یادو نے ہاتھرس کا مدعا اٹھا کر بہار میں دلت ووٹرس کو لبھانے کی کوشش کی ہے ، جب کہ یہ دلت خود کئی خانوں میں تقسیم ہیں ۔ پپو یادو نے یوپی کے وزیر اعلی آدتیہ ناتھ یوگی کے بہانے بی جے پی پر حملہ کرنے کی کوشش کی ہے۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ اپیندر کشواہا بعد میں وزیراعلیٰ بننے کا خواب دیکھیں ، پہلے متحد ہوکر بہار کو بچائیں۔

You might also like