Baseerat Online News Portal

بہار کی عوام تیسرا متبادل چاہتی ہے: گلریز ہدیٰ

ریاست میں 15 سال کے کشاسن اور 15 سال کے سوشاسن سے لوگ چھٹکاراحاصل کرنا چاہتے ہیں
پٹنہ، 6 اکتوبر (بی این ایس )
بہار میں 15 سالکے کشاسن اور 15 سال کے کشاسن سے لوگ چھٹکاراحاصل کرنا چاہتے ہیں۔ ریاست میں حکمراں این ڈی اے اور حزب اختلاف کے مہا گٹھ بندھن کے مابین جو کھینچ تان دیکھنے کو مل رہا ہے اس سے ظاہر ہوتا ہے کہ یہ دونوں اتحادعوام کی ناراضگی سے گھبرائے ہوئے ہیں۔ جو پوری ریاست میں عوام کے درمیان جو انتخابی ماحول دیکھنے کو مل ہے ، اس سے واضح ہے کہ عوام تیسرا متبادل چاہتی ہے۔ اپنے تجربات کی بنیاد پر ، ہم نے جن سنگھرش دل کو عوام کے سامنے ایک سیاسیمتبادل کے طور پر پیش کیا ہے۔ عوام کی سماجی، معاشی ، تعلیمی ترقی ، جو آئینی اور جمہوری اقدار پر مبنی ہے ، ہمارا سب سے بڑا انتخابی مسئلہ ہے۔ پورنماسی رام جی جو جن سنگھرش دل کے قومی جنرل سکریٹری بھی ہیں ۔پورے چمپارن علاقے میں دلتوں محرومین کو یکجا کرنے کے لئے ہمارے ساتھ مہم چلارہے ہیں۔سابق مرکزی وزیر جناب یشونت سنہا کی اپیل پر ،جن سنگھرش دل نے ان کی قیادت میں یو ڈی اے کا اتحادی ہے۔ یو ڈی اے اتحادیوں کے مابین ہونے والے مذاکرات کے بعد پورے چمپارن خطے میں جن سنگھرش دل کی مقبولیت کے پیش نظر ،جن سنگھرش دل اپنا امیدوار کھڑا کرنے کامجازہے۔جن سنگھرش دل مغربی چمپارن ، مشرقی چمپارن ، گوپال گنج ، سیتا مڑھی اور شیوہر اضلاع کی بیشتر نشستوں کے لئے اپنے انتخابی نشان گیس چولھا کے ساتھ امیدوار کھڑے کرے گی۔ آج ، ہمارے لئے یہ ایک اور خوشی کی بات ہے کہ مشرقی چمپارن ضلع کے چریا علاقے سے تعلق رکھنے والے ایک سماجی کارکن اور ماہر تعلیم ، فیروز احمد ، اپنے ساتھیوں سمیت ، جن سنگھرش دل میں شامل ہو رہے ہیں اور ہم ان کا پرتپاک خیرمقدم کرتے ہیں۔

You might also like