Baseerat Online News Portal

این ڈی اے کے زیراقتدارریاستوں میں کسانوں کی آوازدبائی گئی

جینت چودھری پر لاٹھی چارج کے خلاف احتجاج ، آر ایل ڈی کی جاٹ مہاپنچایت
لکھنو8اکتوبر(بی این ایس )
ہاتھرس کیس میں نیشنل لوک دل (آر ایل ڈی)کے لیڈرجینت چودھری پر لاٹھی چارج کے خلاف آج ایک جاٹ مہاپنچایت طلب کی گئی ہے۔جینت چودھری پر حملہ کوکسانوں کے وقار سے جوڑاگیا اور مہاپنچایت میں لاٹھی لہرائی گئی۔ مہاپنچایت میں موجود بہت سے لوگوں نے لاٹھی لہرائی۔اس دوران ابھے چوٹالہ نے کہاہے کہ ملک کے کسان لیڈران اور ملک کے کسانوں کومتحد ہوکر جدوجہد کرنا ہوگی۔ اب وقت آگیا ہے کہ یوپی کسان کسان متحد ہوں جب چرن سنگھ نے ان کومتحدکردیاجن ریاستوں میں بی جے پی اقتدار میں ہے ، وہاں حکومت کسانوں کی آواز دب رہی ہے۔ابھے چوٹالہ نے کہاہے کہ چودھری دیوی لال اور چودھری چرن سنگھ نے ملک میں کسانوں کے لیے جدوجہد کی اور انہیں متحدکیاہے۔یہ حکومت کسانوں کی آوازکوکمزور کرنا چاہتی ہے۔ تمام رہنماؤں کو پارٹی لائن سے آگے متحدہوناچاہیے۔ہاتھرس کے ملزموں کو پھانسی دی جانی چاہئے ، لیکن حکومت ان کی حفاظت کر رہی ہے۔سابق ایس پی رکن اسمبلی دھرمیندر یادو نے کہاہے کہ ہاتھرس کا حملہ جینت چودھری پرنہیں بلکہ چرن سنگھ کی میراث پرتھا۔ یہ کسانوں اور نوجوانوں پر حملہ ہے۔ اکھلیش یادو کا پیغام ہے کہ سماج وادی پارٹی اور آر ایل ڈی الیکشن لڑیں گے۔ عام طور پر یہ تبدیلی مشرق کی طرف سے تھی ، اس بار مغرب کی ہوگی۔

You might also like