Baseerat Online News Portal

ایم آئی ایم کے بہار صدر اختر الایمان کے نام کھلا خط

محترم ومکرم جناب اختر الایمان صاحب!
السلام علیکم ورحمۃ اللہ وبرکاتہ!
عرض خدمت یہ ہے آپ ایک سیاسی لیڈر کے ساتھ شعلہ بیان مقرر بھی ہیں، ایک زمانہ تھا کہ ودھان سبھا میں آپ کی طوطی بولتی تھی اور کوچادھامن میں آپ ایسے محبوب بن گئے تھے کہ لگتا تھا کہ آپ کو کبھی کوئی مات دے ہی نہیں سکتا؛ مگر آپ ایک مرتبہ مولانا اسرارالحق صاحب رحمۃ اللہ علیہ کے مقابلے میں آئے اور اس میں کوئی حرج نہیں تھا؛ مگر آپ نے خداداد زبان وقلم کو خدا کے ولی کے خلاف غلط اور تکلیف دہ انداز میں استعمال شروع کردیا ، وہیں سے آپ کی تنزلی شروع ہوگئی۔
محترم! ا گرچہ آپ نے دنیا کے سامنے یہ ظاہر فرمایا کہ میں مولانا کو کامیاب کرنے کے لئے بیٹھ گیا؛ مگر حقیقت کا علم خود آپ کو بھی ہے، پھر ان ہی حضرت مولانا جن کو کامیاب کرنے کے لئے بیٹھنے کی بات کہی گئی ،آپ نے انہیں کیا کیا برا بھلا نہیں کہا اللہ کی پناہ !!
بہر کیف مولانا تو اپنے مالک حقیقی سے جا ملے اور 2019ء؁ میں میدان آپ کے لئے بالکل خالی ہوگیا تھا، آپ کو تیاری کا بھی خوب خوب موقع ملا ،گاؤں گاؤں چپہ چپہ میں آپ کا دورہ بھی ہوا اور مال بھی خوب خرچ کیا گیا۔ لوگوں نے بھی پورا پورا ساتھ دیا، آپ کے لیے چندہ بھی ہوا،بڑے بڑے قائدین نے آپ کی تائید کی، حضرت مولانا اسرارالحق صاحب رحمۃ اللہ علیہ کے اکثر قریبی لوگ اور بہت سارے علماء بھی گذشتہ کی باتیں بھلا کرآپ کو کامیاب کرنے کے لئے تن من کے ساتھ لگ گئے؛ مگر مولانا رحمۃ اللہ علیہ کی آہ نہیں مٹ سکی اور نہ بھولنے والے مولیٰ نے خلاف توقع کئی سالوں کی کامیاب محنتوں پر پندرہ دن کی محنت کو غالب کردیا ۔
محترم! آپ کے اپنے بھی آج یہ کہتے نظر آرہے ہیں کہ آپ کو مولانا کی آہ لگ گئی ہے،اللہ کرے وہ آہ مٹ جائے، دوسری بات یہ ہے کہ آپ جس پارٹی کے یہاں سربراہ ہیں، مجلس اتحاد المسلمین جس کی آواز قوم وملت کی فلاح و ترقی کا دعویٰ کرتی ہے،اب آپ سے گذارش ہے کہ ٹھاکر گنج اسمبلی حلقہ میں حضرت مولانا اسرارالحق قاسمی صاحب رحمۃ اللہ علیہ کے صاحبزادہ مولانا سعود اسرار ازہری صاحب آر جے ڈی کی طرف سے امیدوار منتخب ہوئے ہیں،آپ اگر قوم وملت کی خاطر اور حضرت مولانا مرحوم کی نسبت اور اکثریت میں حضرت رحمۃ اللہ علیہ کے عقید ت مندوں کا لحاظ کرتے ہوئے اپنی اور مجلس کی طرف سے مولانا سعود صاحب کی حمایت کردیں اور مجلس کی طرف سے کسی کو ٹھاکرگنج اسمبلی حلقے میں امید وار نہ بنائیں تو مسلم ووٹ تقسیم ہوکر نامناسب نتیجہ ظاہر ہونے کا قوی خطرہ بھی ٹل جائے گا اور انشاء اللہ حضرت مولانا کی روح کو آپ سے خوشی حاصل ہوگی اور آپ پر جو دھبہ ھے وہ بھی مٹ جائے گا۔
اور آپ کا اور مجلس کا قد ان شاء اللہ بہت ہی اونچا ہو جائے گا، یہ ایک مخلصانہ اور خیرخواھانہ اپیل ہے۔سنجیدگی سے سوچیے۔ بندہ کے پاس آپ کانمبر نہیں ہے اس لئے اور اس لئے بھی کہ آپ کے دوست واحباب بھی پڑھیں تو ہوسکتا ہے کہ آپ کو نیک مشورہ دیں ۔اس لئے یہ خط کھلا رکھا گیا ہے۔
آپ کا خیرخواہ دینی بھائی ابو الخیر

You might also like