Baseerat Online News Portal

سپریم کورٹ نے ادھو ٹھاکرے کو وزیر اعلیٰ کے عہدے سے ہٹانے اور مہاراشٹر میں صدر راج کے نفاذ کی عرضی مسترد کی

نئی دہلی ،16 ؍اکتوبر( بی این ایس )
سپریم کورٹ نے جمعہ کے روز ادھو ٹھاکرے کو مہاراشٹرا کے وزیر اعلی کے عہدے سے ہٹانے اور ریاست میں صدر راج لگانے کی درخواست خارج کردی۔ چیف جسٹس نے نے کہا ایک اداکار کی موت کا مطلب یہ نہیں ہے کہ ریاست میں نظم ونسق ناکام ہوگیا ہے اور آپ نے جو بھی مثال دی ہے وہ ممبئی کی ہے۔چیف جسٹس ایس اے بوبڑے نے ایک شہری ہونے کے ناطے آپ صدر سے رابطہ کرنے کے لئے آزاد ہیں، یہاں مت آئیں۔ مہاراشٹرا میں صدر راج نافذ کرنے کی درخواست کی سماعت سے سپریم کورٹ نے انکار کردیا۔ چیف جسٹس نے کہا کہ اگر ایسا مطالبہ کرنا ہے تو صدر کے پاس جائیں۔ درخواست میں کہا گیا ہے کہ مہاراشٹر میں ریاستی مشینری ناکام ہوچکی ہے۔ حکمران جماعت مجرموں کو بچانے کے لئے کوشاں ہے۔ درخواست میں سوشانت سنگھ راجپوت کی ہلاکت، کنگنا رناوت کے گھر کو منہدم کرنے اور دھمکی دینے اور سابق بحریہ کے افسر پر شیو سینک کے ذریعہ مہلک حملے کا حوالہ دیا گیا ہے۔

You might also like