Baseerat Online News Portal

ایم پی ضمنی انتخاب: کمل ناتھ۔دگ وجے کی موجودگی میں کانگریس کا منشور جاری،حکومت بننے پر ہوںگے کام

بھوپال ،17 ؍اکتوبر(بی این ایس )
مدھیہ پردیش کی 28 اسمبلی سیٹوںپر ضمنی انتخاب کا انعقاد ہونا ہے۔ ایسی صورتحال میں حکمراں جماعت بی جے پی اور اپوزیشن کانگریس کوووٹروں کو خوش کرنے کی کوشش کر رہی ہیں۔ مدھیہ پردیش کانگریس نے ہفتے کے روز آئندہ ضمنی انتخاب کے لئے اپنا منشور جاری کیا۔ مدھیہ پردیش کانگریس نے اسے وعدہ نامہ قرار دیا ہے۔ یہ 28 اسمبلی کی ضروریات کے مطابق تیار کیا گیا ہے۔ منشور کے اجراء کے دوران سابق وزیر اعلیٰ کمل ناتھ، دگ وجے سنگھ اور پارٹی کے دیگر رہنما موجود تھے۔ مدھیہ پردیش کانگریس کے وعدہ نامہ میں گوورندھن سیوا یوجنا، کورونا سے ہلاک ہونے والے افراد کے اہل خانہ کے لئے پنشن ،کورونا کو ریاستی سطح کی تباہی قرار یدنا شامل ہے۔ اس کے علاوہ اگر کسی خاندان کے سربراہ کا کورونا کی وجہ سے انتقال ہوجاتا ہے، تو اس کے کنبے کے ایک ممبر کو سرکاری ملازمت دینے کی بات کہی گئی ہے ۔ اس کے ساتھ ہی کسانوں کی قرض معافی کو پورا کرنے اور گیسٹ ٹیچر کو مستقل کرنے کا بھی وعدہ کیا گیا ہے۔ واضح رہے کہ گیسٹ ٹیچر کئی سالوں سے مستقبل نوکری کا مطالبہ کررہے ہیں۔قابل ذکر بات یہ ہے کہ کانگریس کے 22 ارکان اسمبلی کے استعفیٰ دینے اور بی جے پی میں شامل ہونے کے بعد ریاست کی اس وقت کی کانگریس حکومت اقلیت میں آگئی تھی ، جس کی وجہ سے کمل ناتھ نے 20 مارچ کو وزیر اعلی کے عہدے سے استعفیٰ دے دیا تھا۔ پھر 23 مارچ کو مدھیہ پردیش میں شیوراج سنگھ چوہان کی قیادت میں بی جے پی کی حکومت تشکیل دی گئی۔ اس کے بعد کانگریس کے تین دیگر ارکان اسمبلی بھی کانگریس چھوڑ کر بی جے پی میں شامل ہوگئے۔

You might also like