Baseerat Online News Portal

کیوٹی کی بے مثال ترقی کے لئے فراز فاطمی کو پھر موقع ملنا ضروری ۔۔۔۔۔، جے ڈی یو لیڈر مولانا مذکر خان نے کیوٹی میں پارٹی امیدوار کے لئے چلائی رابطہ مہم

دربھنگہ۔ 25/ اکتوبر۔۔۔۔۔

بہار کی سیاست میں کیوٹی اسمبلی حلقہ کو کئی اعتبار سے سرخیوں میں رہنے کا موقع ملتا رہا ہے اس کی بنیادی وجہ یہ ہے کہ یہاں کے سابق وزیر علی اشرف فاطمی کے بیٹے فراز فاطمی پچھلے پانچ سالوں سے ایم ایل اے رہے ہیں اس وقت جب کہ بہار پوری طرح سیاست میں ڈوبا ہوا ہے تو سیاست سے ایک بڑے طبقے کی نظر اس جیٹ کے نتیجے پر ٹکی ہوئی ہے یہ اور بات ہے کہ یہاں بھی بہار کی دوسری سیٹوں کی طرح کانٹے کا مقابلہ ہے اور وقار کی جنگ جہتنے کے لئے امیدوار جان توڑ کوشش کر رہے ہیں مگر آنے والے دنوں میں ہی اس کا قابل اطمینان دیکھنے کا موقع مل سکے گا البتہ فراز فاطمی کے لئے جاری رابطہ مہم کے تعلق سے جو خبریں آرہی ہیں اس سے نہ صرف ان کے حامیوں میں خوشی کا ماحول ہے بلکہ سیاسی پنڈتوں نے ابھی سے ہی مثبت اشارے دینے شروع کر دیئے ہیں ان کے انتخابی مہم میں سرگرمی سے مصروف مولانا غلام مذکر خان نے اس نمائندہ سے بات کرتے ہوئے بتایا کہ کیوٹی کا پورا سیاسی ماحول فراز کے حق میں تسلی بخش ہے اور امید کی جارہی ہے کہ پچھلے الیکشن کے مقابلے میں وہ زیادہ ووٹوں سے کامیاب ہوں گے انہوں نے کہا کہ یہاں کی عوام نہایت سنجیدہ ہے اور ان کا مزاج ہمیشہ مدعوں پر ووٹ دینا رہا ہے اس لئے اندازہ ہے کہ فراز فاطمی کے ذریعہ پچھلے پانچ سالوں کے دوران کئے گئے کام عوام میں ووٹ ڈالنے کا مدعا بنیں گے اور لوگوں میں ان کے کام کو لے کر جو اطمیان ہے اس سے فراز فاطمی کو ایک بار پھر جیت کا تحفہ ملے گا،انہوں نے کہا کہ باتیں کرنے والوں کو کوئی روک نہیں سکتا مگر سچ یہ ہے کہ اس وقت بہار کے اندر نتیش کمار سے اچھا کوئی چہرہ وزیر اعلی عہدے کے لئے نہیں ہے اس لئے امید ہی نہیں بلکہ مجھے یقین ہے کہ نتیش کمار کے ترقیاتی کاموں کو دیکھ کر عوام ان پر پھر سے اعتماد کریں گے اور اقتدار کا خواب دیکھنے والے لوگوں کا خواب چکنا چور ہوگا،انہوں نے کہا کہ بات چاہے فراز فاطمی کے اپنے حلقے میں کام کی ہو بہار کے حالات کو بدلنے میں نتیش کمار کی پیش رفتوں کی سب ہی اس لائق رہے ہیں کہ ان پر اعتماد کی مہر لگائی جا سکے انہوں نے کہا کہ بہار کہ عوام اچھے برے کا فرق خوب اچھی طرح جانتی ہے انہیں خوب یاد ہے کہ جب نتیش جی اقتدار میں آئے تھے تو بہار بربادی کی آخری منزل تک پہنچ کر اپنی قسمت کا ماتم کر رہا تھا مگر انہوں نے اپنی ایماندارانہ فکر سے بہار کو ترقی کی راہ دکھا کر پوری دنیا میں متعا رف کرایا،مولانا غلام مذکر نے کہا کہ کیوٹی کی تقدیر کو فراز فاطمی نے جد خوبصورتی سے بدلا ہے اسے بھایا نہیں جا سکتا کیوں کہ انہوں نے نہ صرف یہاں کی سڑکوں کو خوبصورت بناکر اس کے جال بچھائے،بلکہ درجنوں پل پلیوں کی تعمیر کے علاوہ تعلیم وصحت کے محکمے میں بھی قابل رشک تبدیلیاں کر کے اس کے اندر نئی سہولیات پیدا کیں،انہوں نے سماج کے ہر طبقے کو یکساں حقوق فراہم کرانے کے لئے جہاں تمام تر سرکاری محکموں کو بدعنوانی سے پاک کرنے کے لئے عملی اقدام کئے وہیں اپنے علاقے کو جرائم سے دور رکھنے کی پالیسی پر بھی بڑی خوبصورتی کے ساتھ کام کیا،ساتھ ہی سلاب کی لعنت سے یہاں کی عوام کو بچائے رکھنے کے لئے بھی انہوں نے اپنے تئیں جو منصوبہ بندی کی اس کی اپنی ایک شاندار تاریخ ہے اور سب سے بڑی بات یہ ہے کہ انہوں نے اپنے حلقے میں کوئی بھی ترقیاتی کام ذات یا مذہب کو دیکھ کر نہیں کیا بلکہ ہر ایک کو اپنا سمجھا ان کے مفادات کے تحفظ کے لئے قدم بڑھائے،شاید ان کے ان ہی سب کارناموں کا اثر ہے کہ وہ اس وقت کیوٹی اسمبلی حلقے سے وابستہ عوام کی پہلی پسند بنے ہوئے ہیں اور عوام انہیں ایک ایسے نمائندہ کی حیثیت سے دیکھ رہی ہے جن کے اندر سماج کا درد اور علاقے کی ترقی وخوشحالی سے محبت کا جذبہ کوٹ کوٹ بھرا ہوا ہے اور وہ اپنے اندر سماج کے لئے بہت کچھ کرنے کی امنگ رکھتے ہیں،اس لئے میں کہ سکتا ہوں کہ فراز فاطمی کو ایک بار پھر نمائندگی کا موقع ملے گا۔

You might also like