Baseerat Online News Portal

مستقل بس اسیٹینڈ کی کمی سے سڑکوں پر لگتی ہیں گاڑیوں کی لمبی قطاریں، مسافروں کا چلنا دشوار

 

رفیع ساگر /بی این ایس

جالے ۔۔ سنگھواڑہ بلاک کے تحت بھرواڑہ بازار جیسے مصروف ترین سڑک پر جام کے مسئلے کی اہم وجہ مستقل بس اسٹینڈ کا نہ ہونا ہے جس باعث مسافر سمیت مقامی لوگ اور وہاں کے تاجروں کو کئی دشواریوں کا سامنا کرنا پڑتا ہے کیونکہ بازار میں کوئی مستقل اسٹینڈ نہ ہونے کے سبب بس ، ٹیمپو اور رکشہ کو ڈرائیور سڑک کے ایک کنارے گاڑی کھڑی کرنے کیلئے مجبور رہتے ہیں۔ اتنا ہی نہیں یہاں پر کچھ لوگ خود کو انچارج مان کر غیر قانونی ڈھنگ سے ڈرائیورز سے رقم کی بھی اگاہی کرتے ہیں۔غورطلب ہوکہ اتربیل – جالے سڑک کے بھرواڑہ ، جالے شنکر چوک، لال پور چوک پر اس طرح کا نظارہ ہر وقت دیکھنے کو ملتا ہے جہاں مقامی 2-4 افراد گاڑی ڈرائیور سے رقم وصولی کرتے ہیں۔ اس وجہ کر بھرواڑہ بازار میں جام کے مسائل کے علاوہ آنے جانے والے مسافروں کو کئی طرح کے مشکلات سے گزرنا پڑتا ہے لیکن مقامی انتظامیہ پر اس کا کچھ بھی اثر نہیں پڑتا ہے صرف کسی وی آئی پی یا اعلیٰ افسران کی آمدگی کی اطلاع ملتے ہی انتظامیہ کی نقل و حرکت تیز ہوجاتی ہے۔ علاوہ ازیں مقامی چھوٹے چھوٹے تاجر بھی غیر مستقل دکانیں لگاکر بھی جام کا مسئلہ پیدا کردیتے ہیں۔اسی طرح سنگھواڑہ لال پور چوک پر جام کی ایک وجہ بٹیشور ناتھ پل پر مچھلی بازار بھی ہے جس وجہ کر سڑک کے دونوں طرف لوگوں کی بھیڑ سے آمد و رفت میں پریشانیاں پیدا ہوتی ہے۔اس کو لیکر تھانہ سطح پر امن کمیٹی کی بیٹھک میں بھی عوامی نمائندے سمیت یہاں کے تاجر سڑک کو تجاوزات سے آزاد کرنے کی بات رکھتے ہیں لیکن انتظامیہ کی جانب سے اس سمت میں کوئی ٹھوس لائحہ عمل تیار نہیں ہو پاتا ہے۔ اس مسئلہ سے عام دنوں میں یہاں کے لوگوں کو مختلف مسائل سے تو دو چار ہونا ہی پڑتا ہے لیکن تہواروں کے موسم میں یہ جام کا مسئلہ ایک بڑا سنگین صورت اختیار کر لیتا ہے۔ دیکھا جائے تو ان سب کی ایک اہم وجہ یہاں مستقل اسٹینڈ کا نہ ہونا ہے۔ ادھر پیر کے دن ٹرک کا گولا ٹوٹ جانے کی وجہ سے یہاں کا نظارہ دیکھنے لائق تھا

You might also like