Baseerat Online News Portal

خواجہ غریب نواز کی شان میں گستاخی سے سارے طبقوں میں سخت ناراضگی

مرکزی اور صوبائی حکومتیں مذہبی رہنماؤں کی عظمت شان پر واضح تعزیرات وضع کریں : الحاج محمد سعید نوری
سرکار غریب نواز رحمۃ اللہ علیہ کی شان میں گستاخی کرنے والوں کا سلسلہ دراز ہوتا جارہا ہے،
بھگوا دھاری آتنکوادی تنظیموں کے آلہ کاروں کی دو فرقوں کے درمیان نفرت پھیلاکر ہندوستان میں مذہبی دہشتگردی برپا کرنے کی ناپاک سازش
ممبئی: 8 جنوری (بی این ایس) جمعرات 7 جنوری کو حجرہ حضرت مخدوم ماہمی، درگاہ مخدوم، ماہم میں رضا اکیڈمی ممبئی کے بانی و سربراہ الحاج محمد سعید نوری کی صدارت میں ایک میٹنگ ہوئی جس میں علمائے کرام وارباب علم ودانش اور وکلاء حضرات نےشرکت کی، اس موقع پر الحاج محمد سعید نوری نے کہا کہ سرکار غریب نواز کی ذات صرف مسلمانوں میں ہی مقبولِ نہیں ہے بلکہ آپ کا آستانہ عالیہ ہر طبقے کے حاجت مندوں اور فریادیوں کے لیے کھلا رہتاہے یہی وجہ ہے کہ اسطرح کی نازیبا حرکت سے نہ صرف مسلمانوں میں بے چینی پائی جاتی ہے بلکہ کروڑوں دوسرے مذاھب کے لوگوں کے دلوں کو بھی تکلیف پہنچی ہے ، اگر حکومتی سطح پر اس پر فوراً لگام نہ لگائی گئی توملک مذہبی تشدد کی آگ میں جھلس جانے گا ۔ درگاہ مخدوم بابا کے چیف ٹرسٹی سہیل کھنڈوانی نے کہا کہ میں خود دو دو درگاہ حاجی علی درگاہ ٹرسٹ ،مخدوم بابا درگاہ ٹرسٹ کی ذمہ داری ایک عرصے سے نبھارہا ہوں مگر اس طرح بزرگوں کی شان میں گستاخی میں نے کبھی نہیں سنی، اس طرح کی حرکت سوچی سمجھی ناپاک سازش ہے جان بوجھ کر مقدس شخصیات کی شان میں گستاخی کرکے مسلمانوں کو واضح طور اکسایا جارہا ہے ملک کا ہر انصاف پسند شہری اسے بخوبی محسوس کر رہا ہے مگر خواجہ غریب نواز کےچاہنے والےلاکھوں ہندو اور مسلمانوں نے صبر وتحمل کا مظاہرہ کیا اور حکومت اور انتظامیہ کو واضح طور پر باور کرانے کی کوشش کی ہے کہ اس پر جتنا جلدی ہو قابو کیا جاے ۔ اس موقع پر موجود علماء کرام نے انتظامیہ کی مستعدی کو سراہا جس کے نتیجہ میں اجمیر شریف درگاہ پولیس اسٹیشن نے مقدمہ درج کرلیا ہے، ادھر ممبئی عظمیٰ کی پولیس بھی حرکت میں آگئی ہے اعلیٰ افسران کی جانب سے سخت احکامات جاری کئے گئے ہیں ۔ اس موقع پر علماء اہلسنت نے مشترکہ طور پر کہا کہ ہم لوگ کب تک اپنے منبرو محراب سے مسلمانوں کو صبرِ وتحمل کی تلقینِ کرتے رہیں گے آخر حکومت کی ہی شہ پر تو ان دریدہ دونوں کو حوصلہ ملتا ہے جو آے دن غریب نواز رحمۃ اللہ تعالیٰ علیہ کی توہینِ کررہےہیں اگر خواجہ صاحب کی شان میں گستاخی کاسلسلہ بند نہیں ہوتاہے توغریب نواز کےدیوانوں کے جذبات کو ہم کب تک سنبھال سکتےہیں، حکومت فوراً اسے گرفتار کر کے عبرت ناک سزا دے ورنہ خواجہ معین الدین چشتی اجمیری کے دیوانےہر دھرم اور ہر مذہب کے پوری دنیا میں رہتے ہیں اگر وہ قانون ہاتھ میں لیکر اپنے طور پر سزا دیے تو اس کی ذمّہ داریاں حکومت پر ہوگی ۔ اس اہم میٹنگ میں کرلاسے مولانا صابر القادری ،مولانا محمد فاروق رضوی مولانا محمد عارف رضا، مولانا محمد عالم رضوی قاری محمد ریس فاروقی ، چیتا کیمپ سے مولانا غلام مصطفیٰ ،مولانامحمد حاثم طایی بھانڈپ سے مولانا ظفرالدین رضوی، مولانا معین الدین ، مولانا مقصودِ عالم ،مولاناکمال اشرف شریک تھے، انہوں نے مشترکہ طور پر بیان دیا کہ ہندوستان کی پر امن فضا کوزہر آلود کرنے کی ناپاک کوشش ہر گز برداشت نہیں کی جاے گی ۔ مولانا محمد فاروق رضوی نے سخت لہجے میں کہا کہ اگر یہ سلسلہ نہ رکا تو ہندوستان میں مذہبی نفرت کی کی آندھی طوفان کی شکل اختیار کر جائے گی ۔ مفتی منظر حسن اشرفی نے کہا کہ بھگوا دھاری آتنکوادی اپنی زبان کو لگام دیں بولنا ہمیں بھی آتا ہے ہمارے صبر کا امتحان مت لو ہم اپنا سر تو کٹا سکتےہیں مگر سرکارغریب نواز کی شان میں گستاخی ہرگزبرداشت نہیں کرسکتے، جب سے بی جے پی گورمنٹ آیی ہے بھگوا دھاری ناگ کھلے عام اپنے ناپاک عزائم کو لیکر آے دن طوفان بدتمیزی برپا کرتے ہیں جیسےہی جے پی کی حکومت میں ان کو کھلی چھوٹ مل گئی ہے ۔ اس اعلیٰ سطحی مشاورتی میٹنگ میں ممبئی عظمیٰ کے علمائے کرام و اربابِ علم ودانش کے علاوہ دیگر عاشقان غریب نواز نے شرکت کی ۔

You might also like