Baseerat Online News Portal

وارڈ ممبر پر گولی چلانے کے معاملہ میں گرفتار مکھیا سمیت 4 ملزمین جیل رسید، زخمی وارڈ ممبر سے ایم ایل اے نے پی ایم سی ایچ میں کی ملاقات

 

رفیع ساگر /بی این ایس

جالے۔ سمری پنچایت کے وارڈ نمبر 12 کے ممبر گنیش ساہ کو گولی مار کر زخمی کرنے کے معاملے میں مفرور ملزم ٹیچر ببن یادو کی گرفتاری کے سلسلے میں مقامی پولیس مختلف مقامات پر چھاپے مار رہی ہے۔ٹیچر جالے بلاک کے اہیاری مڈل اسکول میں پوسٹیڈ ہے۔ساتھ ہی پولیس ببن یادو کی مجرمانہ رکارڈ بھی کھنگال رہی ہے۔سابقہ ​​رکارڈ کی بنیاد پر ٹیچر کے بڑے بھائی کی ہلاکت کے معاملے کی تحقیقات میں بھی انتظامیہ سرگرم عمل ہے ۔اس معاملے میں گرفتار مکھیا وشوناتھ پاسوان عرف بھولا ، اسکارپیو ڈرائیور انیل یادو عرف گوپی ، لال بابو ساہ ، بھلور یادو کو جمعہ کو عدالتی تحویل میں جیل بھیج دیا گیا ہے ۔ سبھی کا الگ الگ بیان ریکارڈ کرتے ہوئے پولیس ببن یادو کے گھر پارٹی میں شامل لوگوں کی تلاش کررہی ہے ۔ کارروائی کے دوران ببن یادو کے گھر سے برآمد 3 زندہ کارتوس کے ساتھ پستول کو عدالت میں بھیجا گیا ہے۔ بتایا جاتا ہے کہ ضبط پستول سے ہی وارڈ ممبر کے پیٹ میں گولی لگی ہے ۔ جس کا علاج پی ایم سی ایچ کے سرجیکل وارڈ میں چل رہا ہے جہاں اس کی صحت میں بہتری آئی ہے۔ تھانہ صدر ہری کشور یادو نے بتایا ہے کہ برآمد شدہ پستول کی جانچ فرانسک سائنس لیب سے کرائی جائے گی ۔ ادھر مقامی ایم ایل اے ڈاکٹر مراری موہن جھا نے زخمی وارڈ ممبر گنیش ساہ سے پی ایم سی ایچ میں ملاقات کر کے انہیں صحت میں بہتری کا حوصلہ بڑھایا اور اسپتال انتظامیہ سے مکمل جانکاری لی ۔ ضلع پریشد ممبر اوم پرکاش ٹھاکر نے اس واقعہ پر غم کا اظہار کیا ہے۔

 

You might also like