Baseerat Online News Portal

بچوں کو قرآن کریم کی تعلیم سے آراستہ کرنے پر روز محشر والدین کو اعزاز واکرام کے جوڑے پہنائے جائیں گے

مجلس تحفظ ختم نبوت ٹرسٹ کاماریڈی کے ذمہ داران کا ضلع سرسلہ کے لنگنا پیٹ کے جلسہ سے خطاب

حیدرآباد:۱۲؍جنوری(پریس ریلیز) بچوں کو قرآن کی تعلیم واسلامی تربیت ضروری ہے ،بچے آج چھوٹے ہیں اِنھیں حفظ یاد کرنا آسان ہے ،بچوں کو قرآن کی تعلیم وتربیت کی فکر کرنا ماں باپ کی اہم ذمہ داری ہے ،وہ ماں باپ جو اپنے بچوں کو دنیا میں قرآن کی تعلیم سے آراستہ کرائیں گے اُنھیں روزمحشر اللہ سبحانہٗ وتعالیٰ اعزازو اکرام کے جوڑے پہنائیں گے جن کے بچے حافظ قرآن بنیں گے اُنکے سرپر آفتاب ومہتاب سے بھی زیادہ روشن تاج پہنایاجائیگا ،اِن خیالات کااظہار حافظ محمد فہیم الدین منیری ناظم مجلس تحفظ ختم نبوت ٹرسٹ کاماریڈی کے مکتب حضرت صہیب بن سنان ؓ کے سالانہ جلسہ تعلیمی مظاہرہ سے صدارتی خطاب کرتے ہوئے کیا،نیز سلسلہ خطاب کو جاری رکھتے ہوئے کہا کہ ہمارے اس علاقے میں دیگر ریاست سے تعلق رکھنے والے علماء حفاظ کا بڑا احسان ہے کہ دور دراز سے آکر یہاں دین کی خدمت کررہے ہیںمجاہدے کے ساتھ کم تنخواہوں میںبھی بہترین خدمت انجام دے رہے ہیں، ہمیں بھی چاہئے کہ ان علماء حفاظ کی قدر کریں،اُنکی عزوت واکرام کریں ،مزید کہا کہ بچوں کی تعلیم کیساتھ بڑوں کی تعلیم کی بھی فکر کرنے کی ضرورت ہے ،وضو،نماز،غسل،نمازجنازہ، وودیگر عبادات کا طریقہ وفرائض وواجبات سے واقفیت کیلئے کسی ایک نماز کے بعد تعلیم بالغان کا سلسلہ شروع کریں ،ہم عالم بنے یا طالب علم بنے علم دین سیکھتے رہیں ،نیز عوام کو ایک بات کی طرف پرزور ترغیب دلاتے ہوئے کہا کہ ہمارا ملک عزیزبھارت گنگا جمنی تہذیب کا گہوارہ ہے حضرت مولانا سید ارشد مدنی صاحب دامت برکاتہم کا ملک کے باشندوں کیلئے یہی پیغام ہے کہ اس ملک کی ترقی پیار ومحبت کی فضاء سے ہی قائم ہوسکتی ہے ،ہمیں چاہئے کہ ایک دوسرے کے دکھ درد میں شریک ہوں خوشی کے موقع پر مبارکباد دیں،آنے والوں کا صحیح استقبال کریں ،قدر کریں،پڑوسیوں کے ساتھ حسن سلوک کا معاملہ کریں کسی کو بھی کسی قسم کی تکلیف نہ دیں ،پیارے آقا ﷺ نے پڑوسیوں کے ساتھ حسن سلوک کی تعلیم دی ہے،قوم کے بڑوں کے ساتھ اکرام کا معاملہ فرمایا ہے،اس پروگرام سے مولانا نظر الحق صاحب قاسمی دیناجپوری ناظر مجلس تحفظ ختم نبوت ٹرسٹ کاماریڈی نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ لنگنا پیٹ میں ہر سال تعلیمی مظاہرہ ہوتا ہے یہاں سے تعلیم حاصل کئے ہوئے طلباء مجلس تحفظ ختم نبوت ٹرسٹ کاماریڈی کے سالانہ پروگرام میں حصہ لیتے ہیں اور نمایاں مظاہرہ پیش کرتے ہیں ،طلباء کے تعلیمی مظاہرہ ہر تاثرات پیش کرتے ہوئے کہا کہ ان بچوں کا بڑوں کے سامنے پروگرام پیش کرنا بہت ہمت کی بات ہے ،ناظم مجلس حضرت حافظ محمد فہیم الدین منیری صاحب کی خدمات کا تذکرہ کرتے ہوئے کہا کہ حضرت کی فکر اور مشن یہ ہے کہ ہرمسجد آباد ہو وہاں کے ائمہ اور معلمین کی ضروریات کی تکمیل کیلئے ہمیشہ کوشاں رہتے ہیں ،اس کیلئے قریہ قریہ کے دورے کرکے سب کی خبر گیری کرتے ہیں ،مولانا نے کہا کہ ہرکام مشورہ سے کر نا چاہئے اس سے بہت فائدے ہیں،غیر مسلموں کے ساتھ محبت اور ہمدردی کا معاملہ کریں،نیز بحیثیت مہمان خصوصی مولانا منظور عالم صاحب مظاہری نے شرکت کی اورمکاتب کی اہمیت پرروشنی ڈالتے ہوئے کہا کہ ہم جس طرح بچوں کی عصری تعلیم کا فکر کرتے ہیں اسی طرح بلکہ اس سے بھی زیادہ بڑھ کر ہم دینی تعلیم کی فکر کریں ،ورنہ بعید نہیں کہ ارتداد کی لہریں رات دن ہمارے پیچھے پڑتے رہیں گے ،پھر ہماری نسلوں سے دین ایمان ختم ہو جائیگا ،ماضی میں قادیانی لنگنا پیٹ کے مضافاتی علاقوں میں کیسی محنت کررہے تھے ،اللہ کا شکر ہے کہ اللہ نے ہمیں معلم کی نعمت سے سرفراز فرمایا نیز کہا کہ بچوں نے تعلیمی مظاہرہ پیش کیا اس کے پیچھے کئی شخصیات کی محنتیں ہیں معلم صاحب کی محنت مجلس کے ذمہ داران کی فکریں ہیں،اس پروگرام میں قائدین نے بھی شرکت کی جن میں قابل ذکر جناب حمید الدین خالد صاحب نے تاثرات پیش کرتے ہوئے کہا کہ مجلس تحفظ ختم نبوت ٹرسٹ کاماریڈی کے ذمہ داران قادیانی فتنہ کی تعاقب میں دن رات محنت میں لگے ہوئے ہیں ،آج ہم جس مقام پر ہیں یہاں اور اطراف کئی دیہاتوں میں قادیانی اپناجال بچھا چکے تھے اللہ تعالیٰ کاماریڈی کے ذمہ داران کو جزائے خیر عطاء فرمائے انھوں نے یہاں پہنچ کر گمبھی راؤ پیٹ کے ذمہ داران و نوجوانوں کو ساتھ لیکر کام کیا آج الحمد اللہ علاقے سے قادیانی کا خاتمہ ہوا، بچے بہترین قرآن اور دینی معلومات سے آراستہ ہورہے ہیں ،نیز یہ کہا کہ میں ذمہ داران مجلس ،مقامی احباب ومعلم صاحب کو مبارک باد پیش کرتاہوں،مقامی قائد موجودہ سرپنچ لنگنا پیٹ نے بچوں کو کہا کہ اچھا کھاؤ اور اچھا پڑھو،اچھا کھانے سے صحت بنتی اور اچھا پڑھنے سے قابل بنتے ہیں تم لوگوں نے جو پڑھا مجھے بہت اچھا لگا،اس کے بعد نائب سرپنچ لنگنا پیٹ نے کہاکہ ہمارے سرپنچ صاحب طلباء ہمت افزائی کیلئے اس پروگرام میں شرکت کی ہے ،یقیناً آنے چارچاند لگائے،یہ کام بہت ضروری ہے کہ چھوٹوں کی ہمت افزائی کریں اُنکی آج کی بچپن کی ہمت افزائی اُنھیں جوانی میں بہت اُونچے مقام ومرتبہ پر پہنچاتی ہے، علی صاحب ٹیچرنے سب کا خْیر مقدم کرتے ہوئے کہا کہ تلنگانہ سرکار مسلمانوں کیلئے بہت سارے اسکیمات متعارف کروایاہے ہم حکومت کے شکرگذار ہیں نیز پروگرام کی تفصیل بتاتے ہوئے کہا ،مفتی محمد خواجہ شریف مظاہری ترجمان مجلس تحفظ ختم نبوت ٹرسٹ کاماریڈی نے جلسہ کی مکمل کاررؤائی چلائی اور اخیر میں رقت انگیز دعاء کی ،حافظ محمد شمشاد عالم امام ومعلم لنگنا پیٹ نے سب کا شکریہ اداکیا۔

You might also like