Baseerat Online News Portal

ٹی ایم سی لیڈرنصرت جہاں نے بی جے کوبتایا کورونا وائرس سے زیادہ خطرناک، بی جے پی کاپلٹ وار

کولکاتہ، 15 جنوری (بی این ایس )
مغربی بنگال میں برسر اقتدار ترنمول کانگریس کی رکن پارلیمنٹ نصرت جہاں نے عوامی طور پر بی جے پی کو کورونا وائرس سے بڑا خطرہ قرار دیا ہے۔ نصرت جہاں نے یہ تبصرہ اس وقت کیا جب وہ خون عطیہ کرنے والے کیمپ میں تھیں۔فلمی دنیا سے سیاست میں آنے والے ٹی ایم سی کی ایم پی نے اپنے پارلیمانی حلقہ بشیرہاٹ میں ایک میٹنگ کے دوران کہا تھاکہ اپنی آنکھیں اور کان کھلے رکھیں کیونکہ آپ کے آس پاس کچھ لوگ ہیں جو کورونا سے زیادہ خطرناک ہیں، کیا آپ جانتے ہیں کہ کورونا سے زیادہ خطرناک کیا ہے؟ وہ بی جے پی ہے، کیونکہ وہ ثقافت کو نہیں سمجھتی، کیوں کہ وہ انسانیت کو نہیں سمجھتی ہے، وہ ہماری محنت کی قدر نہیں سمجھتی، وہ صرف کاروبار کو سمجھتی ہے، اس کے پاس بہت پیسہ ہے، وہ اسے ہر جگہ پھیلا رہی ہے۔ اس کے بعد وہ لوگوں کو مذہب کی بنیاد پر تقسیم کرکے فسادات کراتے ہیں۔نصرت جہاں کے بیان کو مسترد کرتے ہوئے بی جے پی کے آئی ٹی سیل کے سربراہ امیت مالویہ نے ممتا بنرجی اور ان کی پارٹی پر مسلم حامی ہونے کا الزام عائد کیا۔ مالویہ نے کہاکہ مغربی بنگال میں ویکسین پر بدترین سیاست ہو رہی ہے۔ پہلے ممتا بنرجی کی کابینہ کے موجودہ وزیر صدیق اللہ چودھری نے ویکسین لے جانے والے ٹرک کو روکا، اب ٹی ایم سی کی ایک رکن پارلیمنٹ مسلم اکثریتی ضلع بشیرہاٹ میں انتخابی مہم چلاتے ہوئے بی جے پی کا موازنہ کورونا سے کررہی ہیں لیکن دیدی (ممتا بنرجی) خاموش ہیں، کیوں؟ تقسیم والی سیاست؟۔

You might also like