Baseerat Online News Portal

بہار:روپیش قتل بنا سیاست کا اکھاڑا ، اب اوپیندر کشواہا نے وزیراعلی نتیش کودی نصیحت

پٹنہ، 15 جنوری (بی این ایس )
نتیش سرکار بہار کے روپیش سنگھ قتل کیس سے متعلق سوالات میں گھری ہوئی ہے۔ انتظامیہ کی ناکامی پر اپوزیشن بھی حکومت پر حملہ آور ہے۔ اسی کڑی میں آر ایل ایس پی کے قومی صدر اوپیندر کشواہا نے نتیش کمار کو مشورہ دیا ہے۔ انہوں نے صحافیوں پر نتیش کے غصے پر بھی حملہ کیا ہے۔ اوپیندر کشواہا نے کہا کہ اگر آپ کے غصہ کرنے سے جرائم ختم ہوجاتے ہیں تو آپ غصہ کریں۔ سچائی تو یہی ہے کہ بہار میں جرائم بڑھ رہے ہیں۔نئی حکومت کے قیام کے بعد بہار میں جرائم میں اضافے پر اوپیندر کشواہا نے کہا کہ وزیر اعلی کو چاہئے کہ وہ امن و امان پر ترجیح دیں، کیونکہ کسی کی زندگی امن و امان نہ ہونے کی وجہ سے ضائع ہوچکی ہے۔ بہار میں ایسی صورتحال ٹھیک نہیں ہے۔ اوپیندر کشواہا نے کہا کہ وزیراعلی نتیش کو لالو راج کا بہار میں امن و امان سے موازنہ نہیں کرنا چاہئے۔ بہار میں امن و امان کو کس طرح درست کرنا چاہئے؟۔ ساتھ ہی مرکزی وزیر گری راج سنگھ نے بھی وزیراعلی نتیش کمار کے بیان پر بیان دیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ روپیش کو کیوں مارا گیا، ابھی تک یہ معلوم نہیں ہوسکا ہے، ہم حکومت کا حصہ ہیں، ہمارا کام اس پورے معاملے کی تحقیقات کرنا اور قصورواروں کو گرفتار کرنا ہے۔ انہوں نے کہا کہ بہار کی پولیس پوری طرح سے تفتیش کر رہی ہے اور جلد ہی اسے کامیابی ملے گی۔ بتادیں کہ انڈگو ایئر لائن کے اسٹیشن منیجر کو منگل کی شام 7 بجکر 5 منٹ پر جب وہ ایئرپورٹ سے اپنے گھرجارہے تھے تو انہیں گولیوں سے اڑا دیا گیا۔ اس واقعہ پر پولیس افسران کی نیندیں حرام ہوگئیں اور عوام نتیش حکومت سے سخت ناراض ہے۔

You might also like