Baseerat Online News Portal

’کورونیل‘پر بابا رام دیو کے دعوے سے آئی ایم اے حیران، وزیر صحت سے مانگی وضاحت

نئی دہلی،22فروری(بی این ایس )
انڈین میڈیکل ایسوسی ایشن (آئی ایم اے) نے پیر کے روز کہا کہ عالمی ادارہ صحت کی جانب سے پتنجلی کی کورونیل کا سرٹیفکیٹ ملنا سراسر جھوٹ تھا ۔ انہوں نے مرکزی وزیر صحت ہرش وردھن سے وضاحت طلب کی۔ پتنجلی کا دعویٰ ہے کہ کورونیل دوائی کووڈ19 کا علاج کر سکتی ہے اور اس کی تصدیق ثبوت کی بنیاد پر ہوئی ہے۔ڈبلیو ایچ او نے واضح کیا ہے کہ اس نے کووڈ19 کے علاج کے طور پر کسی روایتی دوا کی تصدیق نہیں کی ہے۔ یوگا گرو رام دیو کی پتنجلی آیوروید نے 19 فروری کو کہا تھا کہ ڈبلیو ایچ او تصدیق نامہ اسکیم کے تحت کورونیل گولیاں کووڈ 19 کے علاج کے طور پر وزارت آیوش سے سرٹیفیکیشن حاصل کر چکی ہیں۔تاہم پتنجلی کے منیجنگ ڈائریکٹر اچاریہ بالاکرشن نے بعد میں ٹویٹ کیا اور کہاکہ ہم یہ واضح کرنا چاہتے ہیں کہ ہمارے ڈبلیو ایچ او جی ایم ایم کے مطابق کورونیل کے لئے سی او پی پی سرٹیفکیٹ ڈی جی سی آئی حکومت ہند نے جاری کیا تھا۔ واضح ہے کہ ڈبلیو ایچ او کسی بھی دوا کو منظور نہیں کرتا ہے۔ عالمی ادارہ صحت دنیا میں سب کا بہتر مستقبل بنانے کے لئے کام کرتا ہے۔ پیر کے روز آئی ایم اے کی طرف سے جاری کردہ ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ ملک کے وزیر صحت ہونے کے ناطے پورے ملک کی عوام کے لئے جھوٹ کی بنیاد پر غیر سائنسی مصنوعات جاری کرنے کاکیا جواز ہے؟ کیا آپ اس اینٹی کورونا دواکے نام نہاد کلینیکل ٹرائل کے لئے ٹائم فریم کی وضاحت کرسکتے ہیں؟ ۔آئی ایم اے نے کہاکہ ملک وزیر سے وضاحت چاہتا ہے۔

You might also like