Baseerat Online News Portal

دو دن کی راحت کے بعد پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں ایک بار پھر اضافہ

نئی دہلی،23؍ فروری (بی این ایس )
ملک میں متعدد مقامات پر پٹرول کی قیمتیں 100 سے تجاوز کر گئی ہیں۔ لیکن اس اضافے کے درمیان قیمتوں میں کمی کا کوئی امکان نہیں ہے۔ البتہ ایندھن کے تیل کی قیمتیں گزشتہ دو دن سے مستحکم ضرورتھیں ، لیکن آج بروز منگل 23 فروری 2021 کو پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں ایک بار پھر آگ لگی ہے۔ آئل مارکیٹنگ کمپنیوں نے آج تیل کی قیمتوں میں اضافہ کیا ہے۔ آج پٹرول کی قیمتوں میں 35 سے 38 اور ڈیزل کی قیمتوں میں 34 سے 35 پیسے کا اضافہ کیا گیا ہے۔ واضح رہے کہ ملک کے تمام بڑے شہروں میں پیٹرول 90 روپئے فی لیٹر سے زیادہ فروخت ہو رہا ہے۔آج کے اضافے کے بعد سے دہلی میں پٹرول کی قیمت 90.93 روپئے فی لیٹر اور ڈیزل کی قیمت 81.32 روپئے فی لیٹر ہے۔ ممبئی میں پٹرول 97.34 روپئے فی لیٹر تک پہنچ گیا ہے۔ اسی کے ساتھ ہی ڈیزل یہاں 88.44 روپئے فی لیٹر فروخت ہورہا ہے۔ چنئی کے بارے میں بات کی جائے تو پٹرول کی قیمت 92.90 روپئے فی لیٹر ہے جبکہ ڈیزل 86.31 روپئے فی لیٹر فروخت ہورہا ہے۔ کولکاتہ میں پٹرول کی قیمت 91.12 روپئے فی لیٹر اور ڈیزل کی قیمت 84.20 روپئے فی لیٹر ہے۔واضح رہے کہ ملک کی مختلف ریاستوں میں حزب اختلاف کی جماعتیں اضافی قیمتوں کے خلاف سراپا احتجاج ہیں۔ پیر کے روز مدھیہ پردیش ہائی کورٹ میں پٹرول اور ڈیزل کی بڑھتی ہوئی قیمتوں کے خلاف بھی عوامی مفادات کی عرضی دائر کی گئی ہے ، جس میں درخواست گزار نے دعوی کیا ہے کہ صارفین کو پیٹرول اور ڈیزل میں ملا ئے گئے ایتھنول پر زیادہ ٹیکس ادا کرنا پڑرہا ہے۔

You might also like