Baseerat Online News Portal

جیت کے بعدای وی ایم نظام کوختم کرنے کی مہم چلائیں گے

اکھلیش یادونے اقتدارمیں واپسی کادعویٰ کیا،نظم ونسق پریوگی سرکارکوگھیرا
جھانسی 4مارچ(بی این ایس )
جمعرات کوسماج وادی پارٹی کے قومی صدر اکھلیش یادو جھانسی میں تھے۔ یہاں انہوں نے دعویٰ کیاہے کہ ان کی پارٹی آئندہ اسمبلی انتخابات میں 350 سیٹیں جیت گی۔ اقتدار میں آنے کے بعد ، وہ ای وی ایم کے نظام کو ختم کرنے کی مہم چلائیں گے۔اکھلیش یادونے پشپندر یادو انکاؤنٹر کیس کا بھی حوالہ دیا۔انھوں نے کہاہے کہ آج تک حکومت انکاؤنٹر کے نظریہ کوصاف نہیں کر سکی ہے۔ یہ کوئی واقعہ نہیں تھا۔ اس کے علاوہ بھی بہت سارے واقعات ہوئے ہیں۔ رام راجیہ کاخواب دیکھنے والوں کی پولیس بدعنوانی میں پھنس گئی ہے۔در حقیقت اکتوبر 2019 میں ، جھانسی پولیس کا مبینہ ریت مافیا پشپندر یادو کے ساتھ مقابلہ ہوا۔ پولیس نے بتایاہے کہ پولیس اسٹیشن انچارج نے اس کا غیرقانونی ریت سے بھرا ٹرک پکڑا تھا ، جس کے بعداس نے ان پر حملہ کردیا۔ پشپندر انکاؤنٹر میں مارا گیا تھا۔ اسی دوران پشپیندر کے اہل خانہ نے پولیس پر رشوت نہ دینے پرقتل کا الزام عائد کیا۔ اس معاملے میں ، ایس پی صدر اکھلیش یادو نے یوپی حکومت پر سنگین الزامات لگائے تھے۔اکھلیش یادو نے کہاہے کہ ہاتھرس واقعے میں حکومت نے کنبہ والوں کی بات نہیں مانی اور اپنا ذہن اپنایا۔ حال ہی میں ، یہ واقعہ ایک بار پھر پیش آیا۔ بھارتیہ جنتا پارٹی کی زبان بدل گئی ہے۔ جمہوریت میں یہ ایسی زبان نہیں ہوگی جس کو مارا پیٹا جائے گا۔ اکھلیش نے الزام لگایا کہ بھارتیہ جنتا پارٹی جمہوریت کا مکمل خاتمہ کرنا چاہتی ہے۔زرعی قوانین کا ذکر کرتے ہوئے اکھلیش یادونے کہاہے کہ جب کسان قوانین نہیں چاہتا ہے تو پھر حکومت ان پر عمل درآمد کیوں کرنا چاہتی ہے۔ کسانوں کو اپنی زمین پرمزدورکی حیثیت سے زندگی گزارنی ہوگی۔ یہ حکومت گیس ، پٹرول اور ڈیژل سے منافع کمانا چاہتی ہے۔ بندیل کھنڈ میں کسانوں کی زمین ڈیفنس کوریڈور کے نام پر لی گئی۔ لیکن آج چار سال گزر جانے کے باوجود کام شروع نہیں ہواہے۔اگرکسان قرض کی وجہ سے خودکشی کر رہا ہے تو کسانوں کی قرض معافی اسکیم کا کیا ہوا؟

You might also like