Baseerat Online News Portal

اگر حکومت نے زرعی قوانین کو واپس نہیں لیا تو اسمبلی انتخابات میں جھیلناپڑے گا کسانوں کا غصہ : کسان کانگریس

نئی دہلی،5مارچ(بی این ایس )
کانگریس کی کسان یونٹ نے جمعہ کو مرکزی زرعی قوانین کے خلاف جاری کسانوں کے احتجاج کے 100 دن پورے ہونے کے موقع پر کہا کہ مرکزی حکومت کو ڈونرز کے مطالبے کو قبول کرنا چاہئے اور اگر ایسا نہیں ہوتا ہے تو اسے آئندہ اسمبلی انتخابات میں کسانوں کا غصہ جھیلنا پڑے گا۔آل انڈیا کسان کانگریس کے نائب صدر سریندر سولنکی نے ایک بیان میں کہاکہ کسان 100 دن سے سڑکوں پر بیٹھے ہیں لیکن حکومت ان کے مطالبات کو ماننے کیلئے تیار نہیں ہے، اگر حکومت تینوں قوانین کو واپس نہیں لیتی ہے تو اس کا اثر پانچ ریاستوں کے اسمبلی انتخابات میں پڑے گا اور بی جے پی کو کسانوں کا غصہ برداشت کرنا پڑے گا۔ انہوں نے کہاکہ کسان کانگریس اگلے سات مارچ کو ملک کے متعدد دیہاتوں سے جمع کی گئی 101 گڑھی مٹی وزیر اعظم نریندر مودی کوپیش کریں گے تاکہ انہیں ’مٹی کی سوگند‘والا انتخابی وعدہ یاد دلاسکیں۔

You might also like