Baseerat Online News Portal

آسٹریلیائی وزیر اعظم نے بھارت سے شہریوں کی واپسی کے سخت قانون کا دفاع کیا

آن لائن نیوزڈیسک
آسٹریلیائی وزیر اعظم اسکاٹ موریسن نے پیرسے آسٹریلیائی شہریوں پر پابندی عائد کرنے کے فیصلے کا دفاع کیا جنہوں نے بھارت سے اپنے وطن واپسی کی کوشش کی تھی۔انھوںنے کہاہے کہ یہ ان کے مفادمیں ہے اور تیسری لہر کی روک تھام کرے گا۔تاریخ میں پہلی بار آسٹریلیائی حکومت نے اپنے شہریوں کی واپسی پر حال ہی میں پابندی عائد کردی ہے جنہوں نے آسٹریلیائی واپسی سے قبل ہندوستان میں 14 دن گزارے ہیں۔حکومت نے دھمکی دی ہے کہ ایسے لوگوں کے خلاف قانونی چارہ جوئی اور پانچ سال تک قید یا66000 آسٹریلوی ڈالر جرمانہ عائد کیا جائے گا۔ماریسن نے کہاہے کہ یہ ایک عارضی انتظام ہے اور انتہائی مشکل فیصلہ ہے۔انھوں نے کہاہے کہ یہ انتظام اس لیے کیاگیاہے کہ ہمارے پاس آسٹریلیا میں(کوویڈ۔19) کی تیسری لہر نہ پڑے اور ہمارا ملک مستحکم رہے۔انہوں نے کہا کہ یہ ملک کے بہترین مفادمیں ہے۔وزیر اعظم نے کہا کہ وہ ہندوستانی برادری کو برا محسوس نہیںکرتے ہیں۔موریسن نے کہا ہے کہ ہم نے ہاورڈ اسپرنگس سنٹر میں ہندوستان سے واپس آنے والوں میں انفیکشن کی شرح میں سات گنا اضافہ دیکھا ہے۔قائد حزب اختلاف انتھونی البانی نے وزیر اعظم پر تنقید کی ہے کہ وہ آسٹریلیائی عوام کو ہندوستان میں چھوڑ رہے ہیں ۔

You might also like