Baseerat Online News Portal

آئی پی ایل کو نہ صرف فوری بند کیا جائے ،بلکہ اس پر کارروائی کی جائے : محمد ادیب

نئی دہلی3مئی(بی این ایس )
سابق راجیہ سبھا ایم پی محمد ادیب نے آج پریس کو جاری بیان میں کہاکہ جہاں کورونا جیسی وبا نے ملک بھر میں ایک پر تشدد شکل اختیار کرلی ہے ،حکومت ،صحت کی خدمات ،انتظامیہ وقانون سبھی ہندوستان کی سرزمین پرشہریوں کو بچانے میں مصروف ہے،نیزمذہبی ،سیاسی سرگرمیوںسمیت تما م چیزوں پرمکمل طور پر پابندی عائد ہے۔ وہیںانڈین پریمئر لیگ(آئی پی ایل کرکٹ لیگ) چل رہی ہے۔ انہوں نے مزید کہاکہ ہندوستان میں کرکٹ بورڈ دنیا کا امیر ادارہ ہے ،لیکن ابھی تک وہ کورونا کی مدد کرنے میں کوئی قدم نہیں اٹھا سکا،البتہ آئی پی ایل کے لئے کرکٹ کھلا ڑی ذمہ دار ہیں اور کرکٹ کنٹرول بورڈکی انسانیت دم توڑ چکی ہے،ملک میں ہر طرف موت کے سبب غم و غصہ کاماحول ہے،اسپتالوں،بیڈوں ،آکسیجن ،وینٹیلٹروں کی کمی کی وجہ سے سخت پریشان کُن حالات پیدا ہو چکے ہیں،لیکن کرکٹ جاری ہے اور سرکارحالات کو کنٹرول کر نے میں بے بس ہے۔محمد ادیب نے کہاکہ ایک کھلاڑی ملک کا فخرہوتا ہے لیکن انہوں نے ریس کورس کے گھوڑوں کی طرح خرید کر انہیں غلام بنا کر رکھا ہے ،کرکٹ کے دلال ہمارے اور غیر ملکی کھلاڑیوں کو اغوا کر رہے ہیں اور انہیں کھیلنے پر مجبور کر رہے ہیں اور انسانیت کو شرمسار کر رکھا ہے ،ایسے وقت میں معزز سپریم کورٹ ،صدر ،وزیراعظم اور وزارت کھیل فوری طور پر اس پر نوٹس لے، ورنہ ملک کے لوگ سمجھ جائیں گے کہ ہمارے مذہبی ،معاشرتی جذبات کے ساتھ کھیل کھیلاجا رہا ہے۔سابق رُکن پارلیمنٹ نے یہ بھی کہاکہ جب جنرل عوام کو بغیر کسی ماسک کے جرمانہ عائد کیا جاتا ہے ،توآئی پی ایل میں کیوں نہیں۔یہ ابھی تک رہا ہے ،کیوںکہ بورڈ آف کرکٹ کنٹرول میں غیر قانونی طرز عمل اور قانون کے تحت کارروائی کرنے ہر قانون جرمانہ کیوں نہیں لیا جا رہا ہے، بورڈ آف کرکٹ کنٹرول کا پوسٹر ،اسپورٹس پرسن ،حب الو طنی اور حب الوطنی اور انسانیت کا بت دیتے ہوئے کہاہے کہ آئی پی ایل چھوڑیں اور انسانیت کے ساتھ کھڑے ہو ں،بصورت دیگر ملک کے عوام آپ کو کبھی معاف نہیں کریں گے، کیو نکہ 500میٹر کی دوری پر جہاں کرکٹ کا جشن منایا جاتا ہے ، وہیں اسکے قریب قبرستانوں وشمشانوں میں لاشوں کا انبار لگا ہوا ہے ،نیز شہری اسپتالوں میں ایک ایک سانس کے لیے تڑپ رہے ہیں ۔

You might also like