Baseerat Online News Portal

ایل جے پی کے رکن پارلیمنٹ پرنس راج کے خلاف عصمت دری کا مقدمہ درج

پارٹی نے بتایا سیاسی سازش
نئی دہلی، 14 ستمبر (بی این ایس)
لوک جن شکتی پارٹی (ایل جے پی) کے رکن پارلیمنٹ پرنس راج کے خلاف یہاں عدالت کی ہدایت پر عصمت دری کے الزام میں مقدمہ درج کیا گیا ہے۔ پولیس نے منگل کو یہ معلومات دی۔ انہوں نے کہا کہ تین ماہ قبل مبینہ متاثرہ کی طرف سے شکایت درج کی گئی تھی جو پارٹی کا رکن ہے۔شکایت کی بنیاد پر عصمت دری، مجرمانہ سازش اور شواہد کو تباہ کرنے کی دفعات کے تحت مقدمہ درج کیا گیا ہے۔ ایل جے پی کے ترجمان شراون کمار نے پرنس راج کا دفاع کرتے ہوئے دعویٰ کیا کہ ان کے خلاف الزامات ان کی تصویر خراب کرنے کی سیاسی سازش کا حصہ ہیں۔ کمار نے کہا کہ رکن پارلیمنٹ نے 10 فروری کو دہلی پولیس میں اس خاتون کے خلاف ’بھتہ خوری اور بلیک میلنگ‘ کی شکایت درج کرائی ہے جس نے ان پر عصمت دری کا الزام لگایا ہے۔ شکایت کے مطابق ریپ کا مبینہ واقعہ 2020 میں پیش آیا۔ایک پولیس افسر نے بتایاکہ عدالت کی ہدایت 9 ستمبر کو آئی اور متعلقہ دفعات کے تحت کناٹ پلیس پولیس اسٹیشن میں کیس درج کیا گیا ہے۔ پولیس کا کہنا ہے کہ تفتیش جاری ہے اور اس حوالے سے ابھی تک کسی سے پوچھ گچھ نہیں کی گئی ہے۔کسی کا نام لئے بغیر شراون کمار نے الزام لگایا کہ یہ ایک سیاسی سازش ہے اور پولیس کو سمستی پور سے رکن پارلیمنٹ پرنس راج کی شکایت پر فوری طور پر تحقیقات شروع کرنی چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں انصاف کے نظام پر مکمل یقین ہے۔پرنس راج ایل جے پی لیڈر چراغ پاسوان کے چچازادہیں اور پولیس کے مطابق ایف آئی آر میں چراغ کا نام بھی درج ہے۔ پولیس نے بتایا کہ متاثرہ نے الزام لگایا ہے کہ چراغ نے اس پر دباؤ ڈالا کہ وہ پولیس میں شکایت درج نہ کرائے۔

You might also like