Baseerat Online News Portal

نیپال حکومت نے ہندوستان سمیت 12 ممالک میں تعینات سفیروں کو واپس بلا یا

آن لائن نیوزڈیسک
وزیر اعظم شیر بہادر دیوبا کی قیادت والی نیپال حکومت نے سابق وزیر اعظم کے پی شرما اولی کے مقرر کردہ 12 ممالک سے اپنے سفیروں کو واپس بلانے کا فیصلہ کیا ہے۔ ان میں ہندوستان میں نیپال کے سفیر نیلمبر آچاریہ بھی شامل ہیں۔’دی کٹھمنڈو پوسٹ‘ نے ایک خبر میں بتایا کہ اس فیصلے کے ساتھ نیپال کے بیرون ملک 33 سفارتی مشنوں میں سے 23 اگلے تین ہفتوں سے ایک ماہ تک خالی ہوجائیں گے۔ نیز 11 مشنوں میں طویل عرصے سے کوئی سفیر نہیں ہے۔قانون، انصاف اور پارلیمانی امور کے وزیر گیانندر بہادر کارکی نے کہاکہ کابینہ کے اجلاس میں اولی حکومت کی طرف سے مقرر کردہ سفیروں کو سیاسی کوٹے کے تحت واپس بلانے کا فیصلہ کیا گیا۔اس فیصلے کا مطلب ہے کہ نیپال کے کچھ اہم ممالک میں اب سفیر نہیں ہوں گے جن کے ساتھ اس کے بہت قریبی تعلقات ہیں۔ ان میں ہندوستان، چین، امریکہ اور برطانیہ شامل ہیں۔ دیوبا حکومت کے نئے فیصلے کے مطابق آچاریہ کے علاوہ بیجنگ، واشنگٹن ڈی سی اور لندن میں کام کرنے والے سفیر مہندر بہادر پانڈے، یوراج کھٹی واڑہ اور لوک درشن ریگمی کو بالترتیب واپس آنا ہوگا۔آچاریہ کو فروری 2019 میں دہلی میں نیپال کا سفیر مقرر کیا گیا تھا۔نئی حکومت کے قیام کے پانچ دن بعد 18 جولائی کو دیوبا کابینہ نے اولی حکومت کی جانب سے مختلف ممالک میں بطور سفیر 11 سفارشات کو مسترد کردیا۔

You might also like