Baseerat Online News Portal

جالے کو جام سے ملے گی نجات، ڈیڑھ کلو میٹر لمبی بائی پاس سڑک کا وزیر جیویش کمار نے رکھا سنگ بنیاد

جالے سینک پٹرول پمپ سے لکشمی پور ٹولہ تک 1 کروڑ 24 لاکھ 25 ہزار روپے کی لاگت سے بنے گی سڑک
جالے(رفیع ساگر؍بی این ایس) مقامی ممبر اسمبلی و ریاست کے محنت وسائل اور آئی ٹی ڈپارٹمنٹ کے وزیر جیویش کمار نے جمعہ کو دیہی ورکس ڈپارٹمنٹ کی جانب سے جالے میں واقع سینک پٹرول پمپ کے قریب آر سی سی روڈ سے جالے لکشمی پور ٹولہ تک جانے والی سڑک کے تعمیراتی کام کا سنگ بنیاد رکھا۔ تقریبا ڈیڑھ کلومیٹر (490.1)طویل سڑک ایک کروڑ 24 لاکھ 25 ہزار روپے کی لاگت سے بنائی جائے گی۔ مکمل ہونے کے بعد یہ سڑک جالے کے لیے بائی پاس روڈ کے طور پر بھی کام کرے گی۔ اس موقع پر وزیر موصوف نے کہا کہ جالے بلاک میں رورل ورکس ڈپارٹمنٹ سے تعمیر کی جانے والی 34 سڑکوں کے تعمیراتی کام کا سنگ بنیاد اور افتتاح کرنا ہے ۔انہوں نے کہا کہ جالے اسمبلی حلقہ کے 5 پنچایتوں میں ہیلتھ اینڈ ویلنیس سنٹر اور اضافی ہیلتھ سنٹر کی تعمیر 4 کروڑ 75 لاکھ کی لاگت سے ہوگی جس کے ٹینڈر کا کام مکمل ہو چکا ہے۔ جالے ریفرل ہسپتال کے احاطے میں 7 کروڑ 28 لاکھ 24 ہزار روپے کی لاگت سے جدید ترین کمیونٹی ہیلتھ سنٹر کی عمارت کی تعمیر کے لیے حکومت سے منظوری مل گئی ہے۔ وزیر نے کہا کہ سنگھواڑہ بلاک ہیڈ کوارٹر کی نئی عمارت، سدبھاونا منڈپ اور سیلاب پناہ گاہوں کی تعمیر ان کی ترجیحات میں شامل ہیں۔ آنے والے دنوں میں اسے جلد مکمل کر لیا جائے گا۔ پروگرام کی صدارت ویپن کمار پاٹھک اورنظامت دھیریندر کمار نے کی۔ پروگرام میں وجے کمار چودھری، رام للا کشواہا، منوج داس، مہیلا مورچہ کی ریاستی وزیر انجنی نشاد، کامکھیا پاسوان، یوا مورچہ کے منڈل صدر رگھونندن ٹھاکر، جنرل سکریٹری جییندر ٹھاکر، راجہ کمار، اندرجیت جھا سمیت کئی پارٹی کارکنان موجود تھے۔

You might also like