Baseerat Online News Portal

اعظم خان اور ان کے بیٹے عبداللہ اعظم نے رکن اسمبلی کا لیا حلف

 

لکھنؤ۔۲۳؍مئی: سماج وادی پارٹی کے سینئر لیڈر اور ایم ایل اے محمد اعظم خان اور ان کے بیٹے عبداللہ اعظم خان نے آج ودھان بھون میں اسپیکر ستیش مہانا کے دفتر میں رکن اسمبلی کا حلف لیا۔اعظم خان پیر کو اپنے بیٹے عبداللہ اعظم خان کے ساتھ لکھنؤ پہنچے تھے۔ عبداللہ اعظم رام پور کے سوار ٹانڈہ سے ایم ایل اے ہیں۔ اسمبلی کے اسپیکر ستیش مہانا نے انہیں عہدے اور رازداری کا حلف دلایا۔ اس کے بعد اعظم خان اپنے بیٹے کے ساتھ آج بجٹ اجلاس کی کارروائی میں بھی حصہ لیں گے۔گذشتہ دنوں اعظم خان جیل میں رہنے کی وجہ سے اپنے ایم ایل اے کے عہدے کا حلف نہیں اٹھا سکے تھے۔ اسمبلی اجلاس میں ان کی شرکت پر مسلسل شکوک و شبہات پائے جاتے تھے۔ لیکن اتوار کی دیر رات اعظم خان اپنے بیٹے عبداللہ اعظم کے ساتھ لکھنؤ پہنچے۔ اعظم خان تقریباً ڈھائی سال سے سیتا پور کی ڈسٹرکٹ جیل میں بند تھے۔ اعظم خان 19 مئی2022 کو سپریم کورٹ سے عبوری راحت ملنے کے بعد 20 مئی کو جیل سے باہر آئے تھے، اتوار کو لکھنؤ میں سماج وادی پارٹی لیجسلیچر پارٹی کی میٹنگ میں شریک نہیں ہوئے۔ واضح رہے کہ اترپردیش کی 18ویں قانون ساز اسمبلی کے ارکان آج سے شروع ہونے والے قانون ساز اسمبلی کے بجٹ اجلاس میں پہلی بار قومی ای-ودھان درخواست کے تحت چلائی جانے والی کارروائی کا حصہ ہوں گے۔ سال 2022 کے ساتھ ساتھ اٹھارویں قانون ساز اسمبلی کا بھی آج سے پہلا اجلاس ہوگا۔ اجلاس میں ریاستی حکومت مالی سال 2022-23 کا بجٹ پاس کرے گی۔یاد رہے کہ اعظم خان 26 فروری 2020 سے جیل میں تھے۔ اعظم خان کے خلاف 80 سے زائد کیسز چل رہے ہیں۔ سپریم کورٹ نے واضح طور پر کہا کہ ٹرائل کورٹ سے باقاعدہ ضمانت ملنے تک عبوری حکم نافذ رہے گا۔ وہ کئی معاملات میں گزشتہ 27 ماہ سے سیتا پور جیل میں بند تھے۔ سپریم کورٹ سے عبوری ضمانت ملنے کے بعد ان کی جیل سے باہر نکلنے کا راستہ ہموار ہوا تھا۔

You might also like