مسلم دنیا

مذہبی رسومات کی آڑ میں یہودی شرپسندوں کے غرب اردن میں دھاوے

جنین ۱۴؍مئی: (مرکز اطلاعات فلسطین) فلسطین کے علاقے غرب اردن میں صہیونی فوج کی فول پروف سیکیورٹی میں یہودی شرپسندوں نے کئی مقامات پر اشتعال انگیز دھاوے بولتے ہوئے مقامی فلسطینی شہریوں کو ہراساں کرنا شروع کیا ہے۔ گذشتہ روز غرب اردن کے شمالی شہر جنین میں خربہ طانا شہر کے جنوب مغربی علاقے الحفیرہ اور کفیرت کے مقامات پر یہودی آباد کار تلمودی تعلیمات کی ادائی کی آڑ میں داخل ہوئے۔ مذہبی رسومات کی ادائیگی کی آڑ میں یہودیوں نے فلسطینیوں کو زدو کوب کیا اور ان کی املاک کی بھی توڑپھوڑ کی۔مقامی فلسطینی ذرائع نے مرکزاطلاعات فلسطین کو بتایا کہ یہودی آباد کاروں کے ایک گروپ نے کفیرت کے مقام پر دھاوا بولا اور وہاں مذہبی رسومات کی ادائی کی آڑ میں فلسطینیوں کےخلاف نسل پرستانہ کارروائیوں کا ارتکاب کیا۔ یہودی شرپسندوں نے فلسطینیوں کے خلاف نسل پرستانہ اور عرب مردہ باد کے نعرے لگائے۔عینی شاہدین کا کہنا ہے کہ گذشتہ روز سیکڑوں یہودی جنین کے مختلف قصبات میں داخل ہوئے۔ اس موقع پر اسرائیلی فوج اور پولیس نے انہیں فول پروف سیکیورٹی مہیا کی تھی۔ایک عینی شاہد نے بتایا کہ فلسطینی بستیوں میں یہودی آباد کار جیپوں اور موٹرسائیکلوں پر سوار ہوکراشتعال انگیز انداز میں داخل ہوئے۔ اس موقع پر یہودیوں کی شرانگیزی کے خلاف فلسطینی شہریوں نے احتجاج بھی کیا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker