ہندوستان

نیم فوجی فورسز کے لیے ’یوگا میڈل‘

نئی دہلی، 12؍جون-ملک میں یوگا کو فروغ دینے کے عمل کے تحت 21؍جون کو دوسرا بین الاقوامی یوگا دیوس منانے کی تیاری زوروں پر ہے اور نریندمودی کی قیادت والی مرکزی حکومت مرکزی نیم فوجی فورسز کے لیے ’یوگا میڈل ‘کی شروعات کرنے کا منصوبہ بنارہی ہے۔جسمانی، ذہنی اور روحانی طور پر انسان کو تندرست رکھنے والے ہندوستان کی قدیم روایت میں غیر معمولی مہارت دکھانے والے جوانوں کو اس میڈل سے نوازنے کا حکومت کا منصوبہ ہے۔اس کے علاوہ حکومت نے مرکزی مسلح پولیس فورسز سے ریٹائر ہو رہے جوانوں کو ماسٹر یوگا انسٹرکٹر کے طور پر دوبارہ مقرر کرنے کا منصوبہ بھی بنایا ہے۔اس کو لے کر حکومت کا ہدف سی آر پی ایف، سی آئی ایس ایف، آئی ٹی بی پی، ایس ایس بی اور بی ایس ایف کے تقریبا 9 لاکھ اہلکاروں کے ذریعے انسٹرکٹروں کا ایک باقاعدہ ذریعہ تیار کرنا ہے۔ان فورسز اور وزارت داخلہ کے اعلی حکام کی حال میں ہوئی میٹنگ میں یہ دواہم فیصلے لئے گئے۔اس میں فیصلہ کیا گیا کہ بین الاقوامی یوگا دیوس کے دن مختلف ریاستوں اور دیگر بڑے شہروں میں تقریباََ30000جوان حصہ لیں گے۔چندی گڑھ میں جہاں وزیر اعظم نریندر مودی کے یوگا دیوس تقریب میں حصہ لینے کاامکان ہے۔ وہاں2000سے زائد جوان حصہ لیں گے جن میں سے زیادہ تعداد ہندوستان تبت سرحد ی پولیس سے لئے گئے ہیں۔اس سلسلے میں تیار شدہ ایک خاکہ کے مطابق ملک کے سب سے بڑے نیم فوجی دستے سی آر پی ایف کی قیادت میں ایک کمیٹی تشکیل دی گئی ہے جو ان جوانوں کو یوگا میڈل دینے کی سفارش کرے گی جو نہ صرف مختلف آسنوں کو کرنے میں ماہرہیں بلکہ یوگا انسٹرکٹر کے طور پر بھی ان کا ریکارڈ بہت اچھا رہا ہو۔مرکزی ریزرو پولیس فورس، مرکزی انڈسٹریل سیکورٹی فورس، سرحدی سیکورٹی فورس، آئی ٹی بی پی او ر مسلح سرحدی فورس کو ایسے جوانوں کی شناخت کے لیے کہا گیا ہے۔اس کے لیے یہ بھی ضروری ہے کہ اس میڈل کے لیے منتخب کئے گئے جوان اس سال بین الاقوامی یوگا دیوس کے موقع پر اپنی مہارت کامظاہرہ کریں گے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker