ہندوستان

کیرالہ سے لاپتہ 16 میں سے 3 افراد کے داعش میں شامل ہوجانے کا انٹیلی جینس ذرائع کا دعوی

کوزی کوڈ ، ۱۰؍جولائی: گزشتہ ایک ماہ کے دوران کیرالہ سے 16 افراد کے لاپتہ ہونے کی خبر کے دو دنوں بعد انٹیلی جنس ذرائع نے کہا ہے کہ ان میں سے تین افراد نے داعش کو جوائن کرلیا ہے۔ انٹیلی جنس نے یہ بات ان افراد کے ذریعہ اپنے اہل خانہ کو بھیجے گئے میسیج کی بنیاد پر کہی ہے۔بتایا جاتا ہے کہ دو لاپتہ افراد نے اپنے اہل خانہ کو ٹیلی گرام بھیجا ہے۔ ان میں سے ایک نے اپنے ویڈیو پیغام بھیج کر اپنے اہل خانہ کو بتایا ہے کہ انہوں نے داعش کو جوائن کرلیا ہے۔ادھر ہفتہ کو ایک لاپتہ لڑکی نمیشا کی ماں بندھو نے کیرالہ کے وزیر اعلی پنارائی وجین سے ملاقات کی اور ان کو پولیس میں درج کرائی اپنی شکایت کی نقل سونپی اور ان سے اس معاملہ میں مداخلت کی اپیل کی۔ وزیر اعلی نے بندھو کو یقین دہانی کرائی ہے کہ ریاستی حکومت کے ساتھ ساتھ مرکزی حکومت بھی اس معاملہ پر سنجیدہ ہے اور ریاستی پولیس مرکزی جانچ ایجنسیوں کے ساتھ مل کر معاملہ کی سنجیدگی سے جانچ کررہی ہے۔ اس میں آئی بی بھی تعاون کررہی ہے۔قبل ازیں کسری گوڈ ضلع کے پنچایت ممبر وی پی پی مصطفی نے کہا کہ تمام لاپتہ افراد اعلی تعلیم یافتہ ہیں اور متوسط گھرانے سے تعلق رکھتے ہیں ۔گزشتہ دو سالوں سے یہ لوگ مذہب میں گہری دلچسپی بھی دکھارہے تھے ۔کچھ رپورٹوں میں یہ بھی دعوی کیا گیا ہے کہ ان لاپتہ افراد میں انجینئر س اور ڈاکٹرس بھی شامل ہیں ۔کسری گوڈ ضلع سے لاپتہ حفص الدین کے والد حکیم کے مطابق ان کا بیٹا ایک ماہ پہلے چلا گیا تھا اور اب تک اس کے بارے میں کوئی اطلاع نہیں ملی ہے۔ جبکہ ایک انجینئر عبدالرشید اپنی اہلیہ اور دو سال کی بیٹی سے ساتھ یہ کہہ کر گھر سے باہر گیا تھا کہ وہ ممبئی نوکری کرنے کیلئے جارہا ہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker