ہندوستان

انکم ٹیکس ترمیمی بل کے معاملے پر صدر سے مداخلت کا مطالبہ کرے گا اپوزیشن

نئی دہلی، یکم دسمبر

نوٹ بند ی کے خلاف احتجاج کرنے والی اپوزیشن جماعتوں نے آج فیصلہ کیا ہے کہ وہ انکم ٹیکس ترمیمی بل کے معاملے پر صدر سے مداخلت کرنے کا مطالبہ کریں گی ۔انہوں نے الزام لگایا کہ یہ بل کسی ضابطہ پر عمل کئے بغیر جلد بازی میں منظور کیا گیاہے ۔راجیہ سبھا میں اپوزیشن کے لیڈر غلام نبی آزاد کے کمرے میں ہوئی اپوزیشن پارٹیوں کی میٹنگ میں یہ فیصلہ کیا گیا کہ ان کا ایک وفد آج شام اس معاملے پر صدر سے ملاقات کرے گا۔میٹنکگ کے بعد اپوزیشن لیڈروں نے کہا کہ متحد اپوزیشن صدر کو ایک میمورنڈم بھی سونپے گا جس میں ایوان زیریں میں ہنگامہ کے دوران بغیر کسی بحث کے بل کو منظور کئے جانے کے مسئلہ کو اٹھایا جائے گا جومینڈیٹ کا غلط استعمال اور ممبران پارلیمنٹ کے جمہوری حقوق پر حملہ ہے۔آزاد نے کہاکہ کئی اپوزیشن پارٹیوں کے نمائندوں نے میٹنگ میں حصہ لیا اور یہ طے کیا کہ لوک سبھا میں منظور کئے گئے انکم ٹیکس ترمیمی بل کے معاملے پر صدر سے رابطہ کیا جائے گا۔اپوزیشن پارٹیوں نے الزام لگایا کہ بل میں کچھ ترامیم کے لیے صدر کی منظوری ضروری تھی، ایسے میں اصول وضوابط کو نظر انداز کرکے صدر کے عہدے کو کمتر کیا گیا ہے۔ان پارٹیوں نے بلیک منی کے سلسلے میں بیان کو لے کر وزیر اعظم سے معافی مانگنے کا مطالبہ کیا۔میٹنگ میں شامل ہونے والی پارٹیوں میں کانگریس ، ترنمول کانگریس، لیفٹ، بی ایس پی، ایس پی، جے ڈی یو اور ڈی ایم کے شامل ہیں۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker