ہندوستان

اکالی لیڈر بی بی جاگیر کور کو سپریم کورٹ سے راحت نہیں، نہیں لڑ پائیں گی الیکشن

نئی دہلی، 17؍جنوری

سپریم کورٹ نے شرومنی اکالی دل کی لیڈر بی بی جاگیر کور کی سزا پر روک لگانے سے انکار کر دیا ہے۔بی بی جاگیر کور کو اپنی بیٹی کے قتل کے معاملے میں مجرم ٹھہرایا گیا ہے ، انہیں اپنی بیٹی ہرپریت کور کے قتل میں سازش رچنے کے الزام میں پانچ سال کی سزا مل چکی ہے، اب وہ الیکشن نہیں لڑ سکیں گی۔بی بی جاگیر کور 4 ؍فروری کو پنجاب اسمبلی کا الیکشن لڑنا چاہتی تھیں جس کے لیے انہوں نے سپریم کورٹ میں عرضی دائر کی تھی ، جس پر سماعت کرتے ہوئے سپریم کورٹ نے مجرم قرار دینے کے فیصلے پر روک لگانے سے انکار کر دیا۔اس سے پہلے جاگیر کور نے پنجاب اور ہریانہ ہائی کورٹ کا بھی دروازہ کھٹکھٹایا تھا لیکن انہیں کوئی راحت نہیں ملی تھی ، جس کے بعد انہوں نے سپریم کورٹ کا رخ کیا تھا۔ہائی کورٹ نے سزا پر روک تو لگائی تھی، لیکن انتخابات لڑنے کی اجازت تبھی ملتی، جب سپریم کورٹ انہیں مجرم قرار دینے کے فیصلے پر روک لگاتا۔دراصل جاگیر کور کی بیٹی ہرپریت کور نے اس کی ماں کی خواہش کے خلاف شادی کی تھی، جس کے بعد ہرپریت کی لاش پراسرار حالت میں ملی تھی ۔ٹرائل کورٹ نے 2000میں بیٹی ہرپریت کے قتل کی سازش کے معاملے میں بی بی جاگیر کور کو پانچ سال کی سزا سنائی تھی۔

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker