Baseerat Online News Portal

اللہ کی عبادت اور مخلوق کی خدمت کے مجموعہ کا نام سنت ہے :مولانا ندیم صدیقی

جمعیۃ مہاراشٹر علاقہ ودربھ کے۱۱ ؍ اضلاع کے عہدیداران و کار کنان کے تربیتی کیمپ کا شاندار اختتام
ممبئی۔۱۳؍ مارچ ( پریس ریلیز )جمعیۃ علماء ہند ملت اسلامیہ کے جمائو اور استحکام کے خلاف گہری سازش کو بے نقاب کرتے ہوئے ملت کے با شعور اور ذہین لوگوں کو دعوت دیتی ہے کہ و ہ تعمیری کا موں بطور خاص خدمت خلق کی اہمیت کو محسوس کریں اللہ کی عبادت اور مخلوق کی خدمت کے مجموعہ کا نام سنت ہے۔سرور عالم ﷺ کی زندگی میں خالق اور مخلوق دونوں کے حقوق ادا کرنے کا مکمل نمونہ مو جود ہے۔اور اسی مکمل اسوہ حسنہ کا نام ,, سنت رسول،، ہے۔جمعیۃ علماء کے تعمیری پروگرام کے تحت اجتماعی جد جہد کی راہ اپنائیں اور جماعتی رفقاء اس تعمیری پرو گرام کو ایک مقدس مشن سمجھ کر آگے بڑھیں ۔ان زریں خیالات کا اظہار کل گذشتہ جمعیۃ علماء مہا راشٹر کے صدر مولانا حا فظ محمد ندیم صدیقی نے دارالعلوم سو نوری میں ضلع آکولہ میں علاقہ دربھہ کے۱۱؍ اضلاع کے جمعیۃ علماء کے عہدیداروں اور کا رکنوں کے لئے منعقدہ تر بیتی کیمپ سے کیا۔انہوں نے کہا کہ جس طرح کلمہ نماز کی اشاعت دین کا اہم فریضہ ہے اسی طرح مسلمانوں کے اخلاقی حالت کو سدھارنا اور ان میں معاشرتی اتحاد پیدا کرنا ، انکی خد مت کرنا،منکرات و برائیوں سے بچانا اور سماجی سدھار اور معاشی ترقی کے لئے کو شش کرنا قر آان و احادیث کی ہدایات میں شامل ہے ۔صوبائی صدر نے تربیتی کیمپ کی اہمیت و افادیت پر روشنی ڈالتے ہوئے ملک کے مو جودہ حالات میں نہایت ہوشمندی اور حکمت عملی کے سا تھکام کرنے کی ہدایت دی۔
مولانا مفتی روشن شاہ قاسمی سکریٹری جمعیۃ علماء مہا راشٹر علاقہ ودربھہ نے پروگرام کے اغراض و مقاصد پر روشنی ڈالی اور تمام احباب کو تنظیم کے کام کو سمجھنے اوراختتام تک کیمپ کی نششت میں شریک رہنے کی تر غیب دی ۔ مولانا محمد ابراہیم قاسمی صدر جمعیۃ علماء ضلع شولا پور نے جمعیۃ کے اغراض و مقاصد اور اس کے کاز کو دستور اساسی کی روشنی میں بیان کیا ۔انہوں نے اپنے خطاب میں کہا کہ مسلمانوں کی سب سے پہلی ذمہ داری عقائد کی حفاظت ،مدارس ومکاتب کا تحفظ مسلمانوں کے معاشی اور اقتصادی نظام کو مستحکم کرنے کے اقدامات دینی اور عصری تعلیم کی طرف توجہ،خود مکتفی ادارے قائم کروقت کی اہم ضرورت ہے۔انہوں نے مزید کہا جمعیۃ کے عہدیدران اپنی اپنی ذمہ داریوں کی طرف بھر توجہ دیں تاکہ تنظیم کی اہمیت و افادیت ہر ایک مسلمان تک پہونچ سکے ۔
اس موقع پر جمعیۃ علماء مہا راشٹر کے لیگل سیل کے سکریٹری ایڈوکیٹ تہور خان پٹھان نے روز مرہ پیش آنے والے اہم معاملات ہندوستان کے آئین اور آرٹیکل کی روشنی میں تفصیل کے ساتھ روشنی ڈالتے ہوئے جیلوں میں سالہا سال سے بند محروسین ،بے قصور نو جوانوں کو انصاف دلانے کے سلسلے میں جمعیۃ کی جا نب سے کی جا نے والی جدو جہد سے واقف کرایا ۔قاری سمش الحق نائب صدر جمعیۃ علماء مہا راشٹر نے اپنے خطاب میں کہا کہ آرام طلبی چھوڑو آرام کا وقت نہیں ہے ،مجاہدانہ مزاج پیدا کرو ، کوئی بھی چیزبنی بنائی نہیں ملتی ہمیں اپنے اکا بر و اسلاف کی قوم و ملت کے لئے پیش کردہ قربانیوں سے سبق حاصل کرنے کی ضرورت ہے۔
واضح رہے کہ تربیتی کیمپ کا آغاز قرآن کریم کی تلاوت اور نعتیہ کلام سے ہوا ۔بعدہ صوبائی صدر مولانا حافظ محمد ندیم صدیقی نے جمعیۃ کے جھنڈے کی پر چم کشائی کی اور دعاء کی۔یہ پرو گرام ۲؍ نششتوں پر مشتمل تھا پہلی نششت صبح ۹؍بجے شروع ہوکر ۱؍ بجے ختم ہوئی اور دوسری شام ۲؍ تا ۵؍ بجے تک جاری رہی ۔ تمام ضلعی اور تعقلہ جات کے ذمہ داروں نے اپنے اپنے علاقوں میں جاری جمعیۃ کی سر گرمیوں کی رپورٹ پیش کی اور آئندہ اس سے بھی بڑے پیمانے پر کام کرنے کا عزم و ارادہ کیا۔ مولانا عبد المصور ندوی نائب صدر جمعیۃ علماء امرائوتی نے اجلاس کی کار وائی چلائی،اس پروگرام میں جمعیۃ علماء کے ضلعی، شہری اور تعلقہ جات کے عہدیداران و وراکین اوذمہ دارانشریک تھے ۔ مولانا مفتی روشن شاہ قاسمی نے مہمان کرام اور تمام شر کا ء کا شکریہ ادا کیا مولانا حبیب الرحمن قاسمی صدر جمعیۃ علماء مراٹھواڑ کی رقت آمیز دعاء پر پروگرام کا اختتام عمل میں آیا۔ پروگرام کو کامیاب بنانے میں دارالعلوم سونوری کے اساتذہ اور طلباء نے بھر پور جد و جہد کی۔

You might also like