ہندوستان

دعوت دین یہ ہے کہ برادران وطن کے گھر گھر جاکر اسلام کو پیش کریں

دیوبند میں سہ روزہ دعوتی وتربیتی کیمپ سے مولانا دلشاد قاسمی کا خطاب
دیوبند۔ ۲۲؍دسمبر: (رضوان سلمانی) سرزمین دیوبند پر ایک سہ روزہ دعوتی وتربیتی کیمپ کا انعقاد عمل میں آیا جس میں طلبہ دارالعلوم نے بڑھ چڑھ کر حصہ لیا ۔ اس موقع پر پروگرام کے اختتام پر مولانا دلشاد قاسمی نے کہا کہ دعوت دین یہ ہے کہ ہم اپنے برادران وطن کو گھر گھر جاکر اسلام کو پیش کریں اور اس پر عمل کی دعوت دیں تاکہ انسان ہمیشہ کی دوزخ سے بچ کر ہمیشہ کی جنت میں اپنا مسکن بنائے، انسان کو اللہ تعالیٰ نے اس دنیا میں اپنی عبادت وبندگی کے لئے بھیجا ہے ، عبادت وبندگی انسان کو کیسی کرنی چاہئے اس کے لئے اللہ تعالیٰ نے اپنے نیک بندوں کو وقت وقت پر خاص پیغام لے کر دنیا میں بھیجا ، اللہ تعالیٰ کے پیغام کو سب سے پہلے آدم علیہ السلام نے دنیا میں پھیلایا اور آخر میں اللہ کے پیغام قرآن کریم کو ہم تک محمد صلی اللہ علیہ وسلم کے ذریعہ پہنچایا ؎، آج قرآن کریم واحد اللہ تعالیٰ کی وہ مقدس کلام ہے جس نے دنیا میں بسنے والے انسانوں کو یہ پیغام دیا ہے کہ انسان جس جگہ رہتا ہے اس کو وہاں کے ماحول کو خوشگوار کس طرح بنانا اور دوسروں کو اس خوشگوار ماحول کے ساتھ کس طرح رہنا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ آج کے پرفتن اور بگڑتے ہوئے ماحول کو اگر کوئی چیز صحیح وسالم بناسکتی ہے تو وہ وہی پیغام ہے جو اللہ تعالیٰ نے اپنے آخری نبی محمد صلی اللہ علیہ وسلم کو آج سے تقریباً ساڑھے چودہ سو سال پہلے قرآن کریم کی شکل میں دیا تھا آج اگر ہم چاہتے ہیں کہ پوری دنیا امن وشانتی کے ساتھ زندگی گزاریں اور کسی غریب یا مال دار کا ناحق قتل نہ کیا جائے اور ہم ایک دوسرے کی عزت وتکریم کریں، اچھے اخلاق سے ہماری پہچان ہو ، دوسروں کے دلوں پر ہم راج کریں ، کوئی ہمیں دیکھ کر منہ نہ چھپائے بلکہ ہمارا اچھے سے استقبال کریں ، یہ اس وقت ہوسکتا ہے جب اس ذمہ داری کو ہم اداکریں جو نبی علیہ الصلوٰۃوالسلام کے بعد ہم پر عائد ہوتی ہے او رجو مسلمانوں کو دینی وملی فریضہ ہے ۔ انہو ںنے کہا کہ دنیامیں بسنے والا ہر انسان چاہے وہ غریب ہو یا مالدار اسی وقت تک کامیاب ہے جب تک وہ اپنے مالک حقیقی کے بتائے ہوئے راستے پر آخری دم تک چلتا رہے اوراس کی مکمل زندگی عبادت وبندگی میں گزرے۔ مولانا نے کہا کہ اگر کوئی بڑا سے بڑا مال دار ہے لیکن اس کی زندگی اپنے مالک حقیقی کے بتائے ہوئے قانون کے خلاف ہے وہ اللہ تعالیٰ کی نظروں میں ناکام ہے۔ دنیا کے تمام انسانوں کو اور خصوصاً ہمارے ہندوستان میں امن وشانتی کی فضا بنانے کے لئے اور ایک دوسرے کی مدد کرنے کی ضرورت ہے۔ اس موقع پر مولانا حسن قاسمی، عبدالرشید دوستم، مولانا انور ریاضی، ماسٹر اکرم پھلتی، سید اسلم کاظمی وغیرہ موجود رہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker