ہندوستان

راجیہ سبھا الیکشن ۲۰۱۸:  ۲۶؍سیٹوں میں سے کانگریس پانچ، بی جے پی ۱۲؍ پر کامیاب

ترنمول کانگریس کو چار، ٹی آر ایس کے کھاتے میں تین سیٹیں، کیرالہ میں ایل ڈی ایف کامیاب، یوپی میں دسویں سیٹ پر بی ایس پی کوشکست
نئی دہلی۔(نیوز۱۸؍اردو اور ایجنسی) ۲۳؍مارچ: ملک کی 6 ریاستوں کی 25 راجیہ سبھا سیٹوں پر جمعہ کو ووٹوں کا عمل مکمل ہونے کے بعد شام 5 بجے سے ووٹوں کی گنتی شروع ہوئی ۔جیسے جیسے ووٹوں کی گنتی پوری ہوتی گئی نتیجہ کا اعلان کیا جانے لگا، اترپردیش میں آٹھ سیٹیں بی جے پی نے جیت لی ہیں ، نویں سیٹ پر سماج وادی پارٹی کی جیا بچن ۳۸ ووٹوں سے کامیاب ہوئی ہیں ۔ ایک سیٹ پر کراس ووٹنگ کی وجہ سے تنازعہ اُٹھ کھڑا ہوا ہے ۔ جن نتائج کا اعلان ہوا ہے اس کے مطابق کل ۲۶ میں سے کانگریس کو پانچ ،بی جے پی کو تین اور ترنمول کو چار سیٹوں پر کامیابی ملی ہے ، ٹی آر ایس نے تلنگانہ کی سبھی تین سیٹیں جیت لی ہیں۔ کیرل میں ایل ڈی ایف کو شاندار کامیابی ملی ہے۔ یوپی میں آخری سیٹ کا نتیجہ بھی آگیا ہے اور بی ایس پی کو شکست ہوگئی ہے ہوگیا ہے۔اس درمیان چھتیس گڑھ کی راجیہ سبھا کی ایک سیٹ پر آج منعقد ہوئے الیکشن میں حکمراں جماعت بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کی امیدوار سروج پانڈے منتخب ہوئی ہیں۔بی جے پی کی امیدوار سروج پانڈے نے براہ راست مقابلہ میں کانگریس کے لیکھا رام ساہو کو 14 ووٹ سے شکست دی۔ وہیں یوپی بیلٹ پیپر پر اٹھے اعتراض کے بعد الیکشن کمیشن نے ووٹوں کی گنتی روک دی ہے۔ایس پی ایم ایل اے نتن اگروال اور بی ایس پی ایم ایل اے انل سنگھ نے اپنے ووٹ آتھرائز ایجنٹ کو نہیں دکھائے۔اس کی شکایت بی ایس پی نے الیکشن کمیشن سے کی ہے اور اسی وجہ سے ووٹوں کی گنتی روکی گئی ہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker