ہندوستان

سڑک کی تعمیرکو لے کر ہوئی ہنگامہ آرائی

فوٹو۔ سڑک کی تعمیرکو لے کر ہنگامہ آرائی کرتے ہوئے علاقہ کے لوگ
دیوبند، 24مئی (رضوان سلمانی) میونسپل بورڈ دیوبند کی لاپرواہی مسلم محلوں کے لئے پریشانیوں کا سبب بنی ہوئی ہے ، خاص طور پر رمضان المبارک کے مہینہ میں پالیکا انتظامیہ مسلم محلوں کو نہ صرف نظر انداز کررہی ہے بلکہ یہاں کے راستوں اور نالے نالیوں کا برا حال ہے جس کے سبب روزے داروں اور نمازیوں کو پریشانیوں کا سامنا کرنا پڑرہا ہے ۔گزشتہ کئی ماہ سے مسجد رشید سے متصل نالا ٹوٹا پڑا ہے اتنا ہی نہیں بلکہ اب گزشتہ دو ہفتے سے دارالعلوم چوک سے حکیم اسحاق مرحوم کے مکان تک کی سڑک کو تعمیر کے لئے توڑا گیا تھا مگر اس پر ابھی تک تعمیری کام شروع ہی نہیں ہوا اوراس انتہائی مصروف ترین سڑک پر جمع کیچڑ سے لوگوں کا گذرنا مشکل ہوگیاہے۔ دارالعلوم کی مسجد رشید کے قریب واقع جمعیۃ علماء ہند کے قومی صدر مولانا سید ارشد مدنی کے مکان کے باہر نالے کی تعمیر کا کام گزشتہ تین ماہ سے رکا ہوا ہے ، پالیکا انتظامیہ نے نالے کی تعمیر کرنے کی غرض سے نالے کو توڑ دیا تھا جس کے سبب راستہ تنگ ہوگیا اور آنے جانے والوں کو پریشانی اٹھانی پڑرہی ہے ، خاص طور پر نمازکے وقت جب سڑک پر نالے کا گندہ پانی بھر جاتا ہے تو نمازیو ںکو بہ مشکل مسجد تک پہنچنا پڑرہا ہے ، اخبارات کے ذریعہ مسلسل کہا جارہا ہے لیکن پالیکا انتظامیہ غفلت میں سوئی ہوئی ہے۔ سونے پر سہاگہ یہ ہوا کہ وہ نالہ تعمیر کرانے سے پہلے ہی دارالعلوم چوک سے تلہیڑی چنگی کی طرف جارہی سڑک کو پالیکا انتظامیہ نے اکھڑوادیا اور وہاں بھی ابھی تعمیراتی کام شروع نہیں ہوسکا ہے جس کے سبب یہاں لوگوں کو آنے جانے میں مشقت اٹھانی پڑرہی ہے ۔ پالیکا انتظامیہ نے کئی دن قبل اس روڈ کو تڑوادیا تھا لیکن اس پر تعمیراتی کام آج تک شروع نہیں ہوسکا ہے۔ یہ روڈ دارالعلوم چوک سے سیدھا تلہیڑی چنگی جی ٹی روڈ تک پہنچ رہا ہے اور دیوبند میں باہر کے آنے والے مہمان اسی راستے سے دارالعلوم کی زیارت کے لئے آتے ہیں ، سڑک ٹوٹنے کے سبب نالیوں کا پانی پوری طرح سڑک پر ہے جس سے سڑک دلدل کی شکل اختیار کرچکی ہے ، علاقہ کے لوگوں نے پالیکا کے خلاف غصہ کا اظہار کرتے ہوئے اس سڑک کو جلد از جلد تعمیر کرانے کا مطالبہ کیا ہے ۔ دیوبند چیئرمین ضیاء الدین انصاری نے بتایا کہ جلد ہی ان علاقوں میں تعمیراتی کام شرو ع کرادیا جائے گا اور سڑک کی تعمیر کے ساتھ ساتھ نالے کی تعمیر کا بھی کام شروع ہوجائے گا ۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker