ہم دادا گری سے مسجد کی تعمیر نہیں کرنا چاہتے، قانون پر ہمیں بھروسہ ہے :مفتی اسماعیل

ہم دادا گری سے مسجد کی تعمیر نہیں کرنا چاہتے، قانون پر ہمیں بھروسہ ہے :مفتی اسماعیل

مالیگاؤں میں متحدہ محاذ نے بابری مسجد کی تعمیر کو لیکر مشاورت چوک تا شہیدوں کی یادگار پیدل مارچ کیا
مالیگاؤں ۔۶؍دسمبر:(زاہد بیباک) 6 دسمبر یوم سیاہ کے موقع پر بابری مسجد بچاؤ کمیٹی کے بینر تلے مفتی محمد اسماعیل قاسمی کی قیادت میں کل دوپہر ڈھائی بجے مشاورت چوک سے ایڈیشنل کلکٹر آفس تک ایک احتجاجی جلوس کا انعقاد کیا گیا تھا جو شہیدوں کی یاد گار کے پاس جاکر شام 4 بجے ختم ہوا اس سے قبل جلوس کے شرکہ سے خطاب کرتے ہوئے مقررین میں بابری مسجد بچاؤ کمیٹی کے رکن اطہر حسین نے کہا کہ یہ جلوس ہمارے لئے چیلنج ہے ہمیں آج بتانا ہے کہ ہم امن پسند لوگ ہے ، نہال احمد جو قوم کے مجاہد ہے انکی قبر پر ذمہ داران کی حاضری کے بعد یہ جلوس روا دوا ہونگا ، مسلمان سب کچھ کرسکتا ہے دیش سے غدّاری نہیں کر سکتا ہے وہ اپنے شہر کا امن برباد نہیں کر سکتا ، آج کسی طرح کی نعرہ بازی نہیں ہوگی ، مفتی اسمیل آگے بڑھو یہ بھی نعرہ نہیں لگانا ہے ،جب وقت آئیگا تو ہم دو دو ہاتھ بھی کرنے کیلئے تیار رہینگے ،مفتی محمّد اسماعیل قاسمی نے کہا کہ ہمارے اس پروگرام کو ڈائنامیٹ کرنے کی بھرپور کوشش کی گئی ہے ، ملک کے دستور اور قانون کی پاسداری کرتے ہوئے ہم اپنے حق کا استعمال کررہے ہیں ، 6 دسمبر 1992 کو بابری مسجد شہید کر دی گئی جن لوگوں نے دن کے اجالے میں مسجد شہید کی انکا کچھ نہیں ہوا ہم دستور کے مطابق احتجاج کررہے ہے تو ہم پر سختی کی جارہی ہے ۔ ہم ایسے لوگوں کو خود پولیس کے سپرد کرینگے جو امن و امان کو نقصان پہونچانے کی کوشش کرینگے ، یہ ہمارا اپنا شہر ہے اس شہر میں رہنے والے ہر فرد کی ذمہ داری ہم پر ہیکہ انکی جان کی مال کی حفاظت کریں ، ہمارے درمیان گٹھ بندھن میڈیا سیل کے لوگ مسلسل ویڈیو ریکارڈنگ کرینگے اگر کوئی بدامنی کرتا ہے تو اسکے خلاف کاروائی کی جا گی ، ہم غنڈہ گردی اور دادا گری سے مسجد کی تعمیر نہیں کرنا چاہتے ہیں بلکہ قانون کی بنیاد پر کرنا چاہتے ہیں ہمیں ملک کی عدلیہ اور ججوں کے فیصلے پر یقین ہے کہ وہ اپنا فیصلہ دھرم یا استھاں کی بنیاد پر نہیں بلکے قانون کی بنیاد پر کرینگے ، فرقہ پرست طاقتیں بابری مسجد کا فیصلہ قانون کی بنیاد پر نہیں بلکے طاقت کی بنیاد پر کرنا چاہتے ہیں ، جلوس میں دو سے ڈھائی ہزار افراد کا ہجوم تھا جو اڈیشنل کلیکٹر آفس کی بجائے شہیدوں کی یاد گار کے پاس ہی رکتے ہوئے ذمہ داران نے اپنا مطالباتی مکتوب پرانت آفیسر اجے مورے کے سپرد کیا ، کل کے اس مہا گٹھ بندھن کی بابری مسجد بچاؤ کمیٹی کے اس جلوس میں مفتی اسماعیل قاسمی ، اعجاز بیگ ، مستقیم ڈگنٹی ، یوسف الیاس ، عتیق کمال ، حنیف صابر ، سلیم گڑھ بڑھ ، زاہد جممن ، سکندر حاجی ، ناگ ارجن